کچرے کو توانائی میں تبدیل کرنے کیلئے کافی پیشرفت کرلی:عنایت اللہ

کچرے کو توانائی میں تبدیل کرنے کیلئے کافی پیشرفت کرلی:عنایت اللہ

  

پشاور( سٹاف رپورٹر ) خیبر پختونخوا کے سینئر وزیر بلدیات عنایت اللہ نے کہا ہے کہ کچرے کو توانائی میں تبدیل کر کے بزنس ماڈل متعارف کرانے کی جانب کافی پیشرفت کرلی ہے کئی بین الاقوامی کمپنیوں نے کچرے کو توانائی میں تبدیل کرنے میں دلچسپی ظاہر کی ہے حتمی مقصد جلد حاصل کرلیا جائے گا جس سے نہ صرف پشاور صاف ستھرا شہر بن جائے گا بلکہ توانائی کی ضروریات بھی مقامی سطح پر پوری ہوجائیں گی۔ وہ پشاور یونیورسٹی میں واٹر اینڈ سینی ٹیشن سروسز پشاور (ڈبلیو ایس ایس پی) کی صفائی اور عوامی آگاہی مہم ’’گلونہ پیخور‘‘ کی اختتامی تقریب سے خطاب کر رہے تھے ، ناظم ٹاؤن ٹو فرید اللہ کافور ڈھیری، ناظم ٹاؤن تھری ارباب محمد علی، چیف ایگزیکٹو آفیسر ڈبلیو ایس ایس پی انجینئر خان زیب خان، جی ایم آپریشنز انجینئر علی خان اور پشاور یونیورسٹی ٹیچرز ایسوسی ایشن کے صدر ڈاکٹر جمیل احمد چترالی نے بھی اس موقع پر خطاب کیا، قبل ازیں یونیورسٹی ٹاؤن چوک سے پیوٹاہال تک واک نکالی گئی جبکہ دکاندارو ں میں الخدمت فاؤنڈیشن کی جانب سے چھوٹے کوڑے دان تقسیم کئے گئے، سینئر وزیر نے موضوع پر تقریری مقابلے میں حصہ لینے والے گورنمنٹ باچا خان گرلز ڈگری کالج، میونسپل انٹر سکول اینڈ کالج کے طلباء وطالبات اور مہم میں شریک اداروں کے اہلکاروں میں انعامات اور ایوارڈز تقسیم کئے۔ سات روزہ مہم میں منتخب سیاسی نمائندوں، گلی محلوں، حجروں، مساجد اور بازاروں میں لوگوں کے ساتھ آگاہی سیشن منعقد کرائے گئے اور آگاہی مواد تقسیم کیا گیا، ڈبلیو ایس ایس پی کے علاوہ آگاہی مہم میں الخدمت فاؤنڈیشن، تعمیر خلق فاؤنڈیشن، ایس آر ایس پی، محکمہ بلدیات کے واٹسن سیل، شیڈ، احصار، سباؤن،مسلم ہینڈز، یونیسف اور دیگر غیر سرکاری تنظیموں کے نمائندوں نے حصہ لیا۔سینئر وزیر بلدیات نے آگاہی وصفائی مہم کو وقت کا تقاضا قرار دیتے ہوئے ہدایت کی کہ یہ سلسلہ جاری رکھا جائے حکومت ہر ممکن تعاون کرے گی، شہر کی صفائی کے لئے کارپوریٹ طرز پر ادارے کے قیام مثبت نتائج نکلے ہیں، کئی اہداف حاصل کرلئے ہیں، شہر کی صفائی کو ہر حالت میں یقینی بنایا جائے گا۔ انہوں نے کہا کہ صفائی دینی فریضہ ہے لوگوں کو بھی اپنے رویوں میں تبدیلی لاتے ہوئے عملے کا ساتھ دینا ہوگا۔ انہوں نے کہا کہ حیات آباد میں جدید معیار کا پارک بنایا جارہا ہے شہر کی خوبصورتی کے لئے دیگر منصوبے بھی جاری ہیں جن کی تکمیل سے نہ صرف شہر کی خوبصورتی میں اضافہ ہوگا بلکہ لوگوں کو مثبت تفریح کے مواقع بھی میسر آئیں گے۔ انہوں نے کہا کہ صفائی یقینی بنانے اور عوام میں آگہی کے لئے علماء، اساتذہ اور معاشرے میں اثر رسوخ رکھنے والے افراد کی خدمات سے استفادہ کیا جائے جبکہ منتخب نمائندوں، طلبہ اور معاشرے کو ساتھ ملا کر گھر گھر تک پپغام پہنچایا جائے۔

مزید :

کراچی صفحہ اول -