چارسدہ میں تحصیل کونسل کا ہنگامہ خیز اجلاس کا انعقاد

چارسدہ میں تحصیل کونسل کا ہنگامہ خیز اجلاس کا انعقاد

  

چارسدہ (بیورو رپورٹ)تحصیل کونسل کا ہنگامہ خیز اجلا س۔ مختلف منصوبہ جات اور مسائل پر زبر دست تقاریر اور تنقید سے اجلاس نے سرد موسم میں گرم ماحول پید ا کر دیا ۔۔ ممبران نے صحت کارڈ کی تقسیم ، ٹریفک پولیس کی مبینہ کرپشن اور بے ہودہ ہوائی فائرنگ کھل کر بحث کی ۔ تفصیلات کے مطابق تحصیل کونسل کا اجلاس زیر صدارت تحصیل کنوینر ڈاکٹر الطاف ٹی ایم اے ہال میں منعقد ہوا۔ اجلاس میں تحصیل ناظم خلیل بشیر خان عمر زئی ، جماعت اسلامی کے ممبر تحصیل کونسل خیر محمد، ہارون خان ، ناصر خان ، جمعیت علمائے اسلام کے اعظم جان باچہ ، عوامی نیشنل پارٹی کے عبدالصمد ، تحریک انصاف کے پیر علی شاہ ، ٹی ایم او فخر الاسلام ، آر آئی انسپکٹر افتخار خان اور دیگر نے شرکت کی ۔ اجلاس سے خطاب کر تے ہوئے ٹی ایم او فخر الاسلام نے صوبائی حکومت کی جاری شدہ فنڈز اور فنڈز کی تقسیم کے حوالے سے ہاؤ س کو آگاہ کیا ۔ ہاؤس نے فنڈز کی تقسیم کار کے طریقہ کار کی منظوری متفقہ طور پر دی ۔ اجلاس سے خطاب کر تے ہوئے خیر محمد ، ہارون خان ، ناصر خا ن ، اعظم جان باچہ ، عبدالصمد ، پیر علی شاہ اور دیگر نے صحت کارڈ کی تقسیم کار پر شدید تنقید کی اور کہا کہ انصاف صحت کارڈ کی تقسیم غیر سیاسی طریقوں اور بلا تفریق کی جائے ۔ مقررین نے کہاکہ ٹریفک پولیس نے اپنی اصلی ڈیوٹی چھو ڑ کر کرپشن کا بازار گرم کر رکھا ہے ۔ ٹریفک پولیس کی کرپشن کی بنیادی وجہ ان کی عرصہ دراز سے ٹریفک میں تعیناتی ہے ۔ ٹی او فضل سبحان اور دیگر ٹریفک اہلکار وں کا رویہ انتہائی جارحانہ اور نا مناسب ہے ۔ مقررین نے ان ٹریفک اہلکاروں کی فوری تبدیلی کا مطالبہ کیا ۔ مقررین نے کہاکہ ہوائی فائرنگ کو ایک قبیح فعل قرار دیتے ہوئے کہا کہ ہوائی فائرنگ سے کئی زندگیاں داؤ پر لگا دی گئی ہے ۔ مقررین نے کہاکہ چارسدہ میں صفائی ستھرائی کی صورتحال انتہائی نا گفتہ بہ ہے جبکہ بازاروں تجاوزات سے راہگیروں کو مسائل اور ٹریفک کی روانی میں خلل پڑنے سے مشکلات کا سامنا کرنا پڑ رہا ہے ۔ انہوں نے مطالبہ کیا کہ تجاوزات فوری طور پر ہٹا دی جائے ۔ اجلاس سے اختتامی خطاب کر تے ہوئے تحصیل ناظم خلیل بشیر خان عمر زئی نے کہاکہ معزز ہاؤس ممبران کی رائے اور تجاویز کو مقدم رکھ کر عوام کی زندگی میں بہتری لانے کیلئے متفقہ فیصلے کئے جائینگے اور کسی بھی رکن کی حق تلفی نہیں کی جائیگی۔ انہوں نے تحصیل کونسل کے ممبران سے توقع ظاہر کر تے ہوئے کہاکہ ایک پلیٹ فارم پر رہ کر عوامی اعتماد کی تکمیل کے لئے عملی اقدامات اٹھائینگے ۔

مزید :

پشاورصفحہ آخر -