بی جے پی نے مقبول صوفی کے شہید بیٹے کو اپنا کارکن قرار دے دیا

بی جے پی نے مقبول صوفی کے شہید بیٹے کو اپنا کارکن قرار دے دیا

سری نگر(کے پی آئی) بھارتی انتہا پسند جماعت بی جے پی نے حریت کانفرنس کے رہنما محمد مقبول صوفی کے شہید بیٹے کو بی جے پی کا سرگرم کارکن قرار دے دیا تاہم اہل خانہ نے بی جے پی کے دعوے کو جھوٹ قرار دیتے ہوئے کہا ہے بھلا کشمیر کی آزادی کے لیے لڑنے ولا بھی بی جے پی کا رکن ہو سکتا ہے ؟سوپور میں دو دن پہلے نامعلوم بندوق برداروں کے ہاتھوں مارے گئے 25سالہ نوجوان کے اہل خانہ نے بی جے پی کے ان دعوں کو بے بنیاد قرار دیا ہے جن میں کہا گہا کہ وہ بی جے پی کا سرگرم رکن تھا۔ سوپور کے مضافات میں بدھ کے روزنامعلوم بندوق برداروں کے ہاتھوں ہلاک ہوئے 25سالہ عارف احمد صوفی کے اہل خانہ نے بی جے پی کے ان دعوں کہ وہ ان کی پارٹی کا سرگرم رکن تھا کو بے بنیاد قراردیا۔مہلوک نوجوان کے برادر کا کہنا ہے اس کا بھائی بے قصور تھا ۔ عار ف احمد کسی بھی سیاسی پارٹی سے وابستہ نہیں تھا ۔انہوں نے کہا کہ یہ محض میرے بھائی کو بدنام کرنے کیلئے بے بنیاد پرپگنڈہ ہے۔ انہوں نے کہا کہ عارف ہمارے کنبے کا واحد کفیل تھا اور ایک میڈیکل ایجنسی میں کام کرتا تھا ۔ بی جے پی کے اس بے بنیاد بیان کی مذمت کرتے ہوئے انہوں نے کہا کہ ہمارا والد محمد مقبول صوفی پیپلز لیگ کا چیئرمین رہا ہے تو ہم کیسے ایک تحریک مخالف پارٹی کے ساتھ ہاتھ ملا سکتے ہیں ۔

مزید : عالمی منظر