بلو چستان حکومت بچنا مشکل، بزنجو ،کروڑوں کی پیشکش جاری:سرفراز بگٹی

بلو چستان حکومت بچنا مشکل، بزنجو ،کروڑوں کی پیشکش جاری:سرفراز بگٹی

کوئٹہ (این این آئی)نیشنل پارٹی کے مرکزی صدر وفاقی وزیر سینیٹر میر حاصل بزنجو نے کہا ہے کہ وزیراعلی نواب ثناء اللہ زہری کی حکومت بچنامشکل لگ رہی ہے ،تحریک عدم اعتماد کا معاملہ پر اسرار ہے اس پر خدشات ہیں ،یہ بات انہوں نے نجی ٹی وی سے بات چیت کر تے ہوئے کہی۔ انہوں نے کہا کہ میں سمجھتا ہوں کے اگر جمعیت علماء اسلام تحریک عدم اعتمادکی حمایت کر دے توحکومت بچا نا مشکل ہوگا،بلوچستان میں ایک ہی پارٹی ہے جس میں بغاوت ہے بات گاڑیوں اور فنڈز کی جانب جارہی ہے اگر واقع اتنے چھوٹے معاملات تھے تو پھر نوبت عدم اعتماد تک کیسے پہنچی ؟ ہمارا بھی ایک ایم پی اے ہے وہ سمجھتا ہے میرے کیس ختم ہوجائیں گے اور رہا ہو جاؤں گالیکن ہم پریشان ہیں انہیں رہا کون کررہا ہے اور پکڑا کس نے ہے یہ بال متی کنبہ کیسے ا کھٹا ہورہا ہے۔ انہوں نے کہا کہ گزشتہ ایک سال سے اسلام آباد میں ایک رائے یہ ہے کہ ایک اسمبلی کو توڑ کر سینیٹ کے انتخا بات روکے جائیں گے ۔ دریں اثنا ء مسلم لیگ (ن) کے رکن صوبائی اسمبلی میر سرفراز بگٹی نے کہاہے کہ صوبائی حکومت بلوچستان اسمبلی کے اراکین کو خرید نے کیلئے ا ایڑی چوٹی کا زور لگارہی ہے ایک ایک رکن کو کروڑوں روپے کی پیشکش ہورہی ہے اس لئے ایک آزادنہ انکوائری ہونی چاہیے کہ پچھلے ایک ہفتے میں محکمہ خزانہ سے کتنے فنڈز ریلیز ہوئے اگر ایسا ہواتو ہوشرباانکشافات سامنے آئینگے نواب ثناء اللہ خان زہری گھر جائے یا لندن یہ انکی مرضی ہے۔میر سرفراز بگٹی نے کہاکہ وزیراعلی کیخلاف تحریک عدم اعتماد 99فیصد کامیاب ہوگی اور ہماری تحریک کی کامیابی سے جمہوریت مضبوط ہوگی ۔حالات اب پوائنٹ آف نو ریٹرن پر پہنچ گئے ہیں اس لئے ہم نواب ثناء اللہ خان زہری کیساتھ نہیں بیٹھیں گے 9جنوری کو صوبائی اسمبلی میں قائد ایوان کیخلاف تحریک عدم اعتماد پیش ہوگی اور پھر ووٹنگ کیلئے تاریخ مقرر ہوگی ۔

بلوچستان حکومت

مزید : کراچی صفحہ اول