اتواربازاروں میں ناقص اشیاء کی مہنگے داموں فروخت ، صارفین ریلیف سے محروم

اتواربازاروں میں ناقص اشیاء کی مہنگے داموں فروخت ، صارفین ریلیف سے محروم

لاہور (اپنے نمائندے سے) اتوار بازار میں سبزیوں کی قیمتوں میں ہوشربا اضافہ ، گلے سڑے ٹماٹر بھی 40روپے کلو ہو گئے، صارفین انتظامیہ کی نااہلی کا رونا روتے رہے۔ لیموں کی قیمت میں سب سے زیادہ اضافہ ہوا جو بازاروں میں بہت تھوڑی مقدار میں دستیاب تھا۔ گاجریں بھی کم سٹالز پر نظر آئیں۔ اتوار بازار میں سبزیوں کے ریٹس آلو10، پیاز 17، لہسن چائنہ 110، لیموں 40، لہسن دیسی 70، چقندر 50، ادرک 170، سبز مرچ 50، سبز دھنیا 40، پودینہ 5، سبز پیاز 40روپے پاؤ، مولی 7، گاجر 9سبز دھنیا 40 ،شلجم 30، میتھی 18، کریلے 60 روپے ، لال مولی 15جبکہ سفید سیب 50روپے، سیب کالا کوہلو 120روپے، انار قندھاری 140، گرے فروٹ 20، مسمی 80 ، انگور سندر خانی 130، انگور ٹافی 130، کیلا اول 50روپے کے حساب سے فروخت ہوئے ۔اتوار بازاروں میں گرانفروش بھی سر اٹھانے لگے۔وحدت کالونی ماڈل بازار اور شادمان ماڈل بازار میں مہنگائی کا راج اشیائے خور و نوش کی قیمتیں اول درجے کی مگر معیار ناقص رہا ۔ شادمان اور وحدت کالونی اتوار بازار میں پینے کا پانی دستیاب ہے نہ ہی بیٹھنے کا کوئی انتظام ہے ، دالیں بھی پہنچ سے دورہو گئیں۔نرخ ناموں کی لسٹیں بھی کہیں کہیں نظر آرہی تھیں سوچنے کی بات یہ ہے کہ مہنگائی کے جن کو قابو کرنے کے لئے کن اقدامات کی ضرورت ہے۔متعلقہ حکام تو قیمتیں کنٹرول کرنے میں ناکام ہو گئے ہیں۔

مزید : میٹروپولیٹن 1