22ہزار 6سو ملزم گرفتار،پٹرولنگ پولیس کی سال 18ء میں کارکردگی

22ہزار 6سو ملزم گرفتار،پٹرولنگ پولیس کی سال 18ء میں کارکردگی

لاہو(کرائم رپورٹر) ایڈیشنل آئی جی پنجاب ہائی وے پٹرول احمد اسحاق جہانگیرنے کہا ہے کہ پنجاب ہائی وے پٹرول نے سال 2018 میں شاہرات پر مختلف جرائم کے 25 ہزار مقدمات درج کر کے 22ہزار 6سو ملزمان گرفتار کئے جبکہ 9لاکھ 15ہزار بغیر دستاویزات کے موٹرسائیکل قبضہ پولیس میں لئے جس سے جرائم کی روک تھام میں نمایاں مدد ملی ۔شاہرات پر مختلف مسائل کے شکار 1لاکھ55ہزار مسافروں کو مدد فراہم کی گئی۔ اشتہاری مجرمان کی گرفتاری کیلئے خصوصی کاوش کرتے ہوئے شاہرات پر سفر کرنے والے 2ہزار 5سو اشتہاری مجرمان اور 450عدالتی مفروران گرفتار ہوئے، اخباری بیان میں کہا کہ پنجاب ہائی وے پٹرول نے مختلف وارداتوں میں چوری شدہ 14لاکھ 19ہزار روپے برآمد کئے اور 16لاکھ 62ہزار روپے مالیت کی چوری شدہ سرکاری لکڑی برآمد کی۔77قیمتی موبائل اور لاکھوں روپے مالیت کے 43چوری شدہ مویشی بھی برآمد کئے ۔ناجائز اسلحہ کی خلاف کاروائی کرتے ہوئے 91کلاشنکوفیں اور 2ہزار رائفلیں، بندوقیں اور پسٹل قبضہ پولیس میں لئے ۔

دریں اثنا54ہزار لیٹر شراب ، 625کلوگرام چرس , 10کلوگرام ہیروئن اور 6کلوگرام افیون بھی برآمد کی ۔ٹریفک مینجمنٹ کرنے والی 42پٹرولنگ پوسٹوں نے ٹریفک قوانین کی خلاف ورزی پر 1لاکھ 96ہزار چلان ٹکٹ جاری کئے اور 6کروڑ15لاکھ روپے سرکاری خزانے میں جمع کروائے ۔پنجاب ہا ئی وے پٹرول نے سال 2018 میں گرین ہائی ویز مہم کے تحت پورے پنجاب میں779338 پودے لگائے جن میں سے 338821 پودے پروان چڑھے جنکی شرح نمو 43% رہی۔پنجاب ہائی وے پٹرول کے 8 ریجنوں میں قائم موبائل ایجوکیشن یونٹس نے 2473 تعلیمی ادارے ، 4218 بس/ ٹرک اڈے، 3246 کمرشل مارکیٹیں، 910 گاؤں، 916 ہسپتال اور صحت مراکز، 5226 عوامی مقامات،3230 پٹرول پمپس،495 یونین کونسلز، 609 بنک اور 1534 گڈز ٹرانسپورٹ اڈوں کے دورے کر کے 1134038 پمفلٹس اور بروشر تقسیم کیے۔ 359 سیمینارز اور 1387 روڈشوز منعقد کر کے فوگ/ سموگ، ٹریفک قوانین ، روڈ سیفٹی اور حفاظت خود اختیاری سے متعلق تدابیر سے آگاہ کیا۔سال 2018 میں استعداد کار بڑھانے کیلئے 10 کورسز منعقد ہوئے جن میں 10942 ملازمین نے شرکت کی۔

مزید : علاقائی