سپریم کورٹ نے جعلی بینک اکاﺅنٹس کیس نیب کو بھجوا دیا،2 ماہ میں تحقیقات مکمل کرنے کا حکم

سپریم کورٹ نے جعلی بینک اکاﺅنٹس کیس نیب کو بھجوا دیا،2 ماہ میں تحقیقات مکمل ...
سپریم کورٹ نے جعلی بینک اکاﺅنٹس کیس نیب کو بھجوا دیا،2 ماہ میں تحقیقات مکمل کرنے کا حکم

  

اسلام آباد(ڈیلی پاکستان آن لائن)سپریم کورٹ آف پاکستان نے جعلی بینک اکاﺅنٹس کیس کا معاملہ نیب کو بھجوا دیا ہے ، سپریم کورٹ نے ریمارکس دیئے ہیں کہ نیب 2 ماہ میں تحقیقات مکمل کرے ۔عدالت نے بلاول بھٹو زرداری اور وزیراعلیٰ سندھ مرادعلی شاہ کا نام جے آئی ٹی رپورٹ اور ای سے ایل سے نکالنے کا حکم دیدیا،عدالت نے کہا ہے کہ ضروری ہوتودونوں رہنماو¿ں کوالگ سے بلاکرموقف معلوم کریں۔

تفصیلات کے مطابق چیف جسٹس ثاقب نثار کی سربراہی میں بنچ میں جعلی بینک اکاﺅنٹس کی سماعت کی،سابق صدر آصف زرداری کے وکیل فاروق نائیک نے کہاکہ ہم جے آئی ٹی رپورٹ کو مسترد کرتے ہیں، آصف زرداری اورفریال تالپورکابراہ راست کوئی تعلق نہیں،بد نیتی سے بدنام کرنےکی کوشش کی گئی۔

چیف جسٹس پاکستان نے ریمارکس دیئے کہ بد نیتی کاذکرمت کریں،اس پر فاروق ایچ نائیک نے کہا کہ میں اپنے الفاظ واپس لیتاہوں، چیف جسٹس پاکستان نے کہا کہ ہم رپورٹ پرکمنٹس نہ کریں توبہترہے،ہم معاملہ نیب کوبھجواناچاہتے ہیں،جے آئی ٹی رپورٹ بے بنیادنہیں،سندھ میں ایسے ٹھیکے دیکھے جوکاغذوں میں مکمل ہوئے،جے آئی ٹی نے بھی ایسے ہی ٹھیکوں کاذکرکیاہے۔

چیف جسٹس پاکستان نے کہا کہ جنہوں نے 50ہزارنہیں دیکھاان کے اکاو¿نٹس میں 8کروڑفرشتے ڈال گئے؟ہم کیس کومنطقی انجام تک پہنچائیں گے،ملزمان اس بات کوکیوں نہیں سمجھتے ان کے پاس کلیئرہونے کاموقع ہے،تفتیش کاروں کے سامنے پیش ہوکرخودکوبےگناہ ثابت کردیں،چیف جسٹس پاکستان نے کہا کہ ہم جے آئی ٹی کاسکوپ بڑھادیں گے۔

چیف جسٹس ثاقب نثار نے کہا کہ بلاول بھٹو زرداری کو جے آئی ٹی نے کیوں ملوث کیا، وہ معصوم ہیں، انہوں نے کیا کیا ہے، وہ پاکستان آکر اپنی ماں کی وراثت کو آگے بڑھا رہا ہے۔جسٹس فیصل عرب نے استفسار کیا کہ کیا بلاول بھٹو کا اپنا کوئی کردار ہے، چیف جسٹس نے ریمارکس میں کہا کہ کوئی کردار نہیں ہے، انہوں نے یہ بھی پوچھا کہ کیا جے آئی ٹی نے بدنام کرنے یا کسی اور کے حکم پربلاول بھٹو کا نام ڈالا ہے۔؟چیف جسٹس نے پوچھا کہ جے آئی ٹی نے بلاول بھٹو اور وزیر اعلی مراد علی شاہ کے نام کیوں ای سی ایل می ڈالے۔ اس پر جے آئی ٹی کے وکیل نے جواب دیا کہ اس پر عدالت کو مطئمن کروں گا۔ چیف جسٹس کا کہناتھا کہ172 لوگوں کے نام کابینہ دیکھ لی گی ، نیب کو بار بار کہہ رہا ہوں کہ لوگوں کی عزت نفس بہت اہم ہے۔

سپریم کورٹ آف پاکستان نے جعلی بینک اکاﺅنٹس کیس کا معاملہ نیب کو بھجوا دیا ہے ، سپریم کورٹ نے ریمارکس دیئے ہیں کہ نیب 2 ماہ میں تحقیقات مکمل کرے ۔عدالت نے بلاول بھٹو زرداری اور وزیراعلیٰ سندھ مرادعلی شاہ کا نام جے آئی ٹی رپورٹ اور ای سے ایل سے نکالنے کا حکم دیدیا،عدالت نے کہا ہے کہ ضروری ہوتودونوں رہنماؤں کوالگ سے بلاکرموقف معلوم کریں۔

مزید : قومی /علاقائی /اسلام آباد /اہم خبریں