عمران کے اردگرد لوگ اصلاحات نہیں چاہتے :ارشاد عارف

عمران کے اردگرد لوگ اصلاحات نہیں چاہتے :ارشاد عارف
عمران کے اردگرد لوگ اصلاحات نہیں چاہتے :ارشاد عارف

  

لاہور(ویب ڈیسک )سینئر صحافی ارشاد عارف نے کہاہے کہ معیشت کا بحران حکومت کو ورثے میں ملا تھا،ایک دو چیزیں تھیں جو حکومت کرسکتی تھی جس کیلئے پیسے کی ضرورت نہیں تھی، اس میں گڈ گورننس کیلئے بھی پیسے کی کوئی ضرورت نہیں تھی۔وہ پروگرام کراس ٹاک میں گفتگو کررہے تھے ۔

ارشاداحمد عارف نے کہا اگر یہ رائٹ مین فار دی رائٹ جاب کا اصول نہیں اپنائیں گے اور وہی گھسے پٹے لوگ ہیں جو سابقہ حکومتوں کے بھی چہیتے تھے اور ان کے بھی بن جائینگے تو ظاہر بات ہے کہ عوام کو یہ احساس نہیں ہوگا کہ کم از کم گورننس بہتر ہورہی ہے ،دوسری بات یہ کہ تیل کی عالمی قیمتیں کم ہوئی ہیں، لیکن وہ ریلیف نہیں دیا گیا اور ریلیف کو آدھا کردیا گیا۔

انہوں نے کہا عمران خان کی پارٹی اور کابینہ میں اور ان کے ارد گرد ایسے لوگ جمع ہوگئے ہیں جو اصلاحات نہیں کرنے دے رہے۔تجزیہ کار اظہار الحق نے کہا ملکی ترجیحات کا تو حکومت کو خود بھی پتہ نہیں،انہوں نے لوگوں کو جو مایوس کیا ہے اس میں ناصر درانی کے ساتھ کیا ہوا اور اب ڈاکٹر فرخ سلیم کے ساتھ کیا ہوا۔

ماہر معاشی امور ڈاکٹر شاہد حسن صدیقی نے کہا بدقسمتی سے حکومت میں مختلف پارٹیز کے لوگ ہیں اور مشکلات کی وجہ سے ابھی تک وہ یہ کام نہیں کرسکے مگر جو اقتصادی پیکیجز تیز ی سے حاصل کئے گئے اس سے بحران یقیناً ٹل گیا ہے ،اب نادہندہ اور دیوالیہ ہونے والی کوئی بات نہیں۔

مزید : علاقائی /پنجاب /لاہور