ڈاکٹر شاہد مسعود کی ضمانت نہ ہونے میں پی ٹی آئی حکومت کا کیا کردار ہے؟ ایسا دعویٰ کہ آپ کو بھی یقین نہ آئے

ڈاکٹر شاہد مسعود کی ضمانت نہ ہونے میں پی ٹی آئی حکومت کا کیا کردار ہے؟ ایسا ...
ڈاکٹر شاہد مسعود کی ضمانت نہ ہونے میں پی ٹی آئی حکومت کا کیا کردار ہے؟ ایسا دعویٰ کہ آپ کو بھی یقین نہ آئے

  

اسلام آباد (ڈیلی پاکستان آن لائن) پی ٹی وی کرپشن کیس میں زیر حراست سینئر اینکر پرسن ڈاکٹر شاہد مسعود کو عدالت میں پیشی کیلئے ہتھکڑیوں میں جکڑ کر لایا جاتا ہے جبکہ ان کی تاحال ضمانت بھی نہیں ہوسکی۔اب انکشاف ہوا ہے کہ پی ٹی آئی حکومت کے باعث ان کی ضمانت نہیں ہوپارہی۔

نجی ٹی وی 92 نیوز کے پروگرام میں اینکر پرسن ڈاکٹر شاہد مسعود کے خلاف پی ٹی وی کرپشن کیس زیر بحث آیا تو سینئر صحافی رﺅف کلاسرا نے سخت اظہار برہمی کیا۔ انہوں نے کہا ڈھائی تین کروڑ روپے کے کیس میں ڈاکٹر شاہد مسعود کا کیا حال کیا جارہا ہے؟۔ انہوں نے کوئی قتل تو نہیں کیے تھے، کوئی منی لانڈرنگ تو نہیں کی، ملک کو تباہ تو نہیں کیا لیکن ان کا جو حشر ہورہا ہے انہیں نشان عبرت بنادیا گیا ہے۔ کیس میں جان نہیں رہ گئی لیکن کچھ طاقتور لوگ ان کی ضمانت نہیں ہونے دے رہے ۔

ڈاکٹر شاہد مسعود کے وکیل شاہ خاور نے بتایا کہ سارے پیسے واپس ہوچکے ہیں لیکن ضمانت پھر بھی نہیں ہورہی۔ جن ملزمان کے پہلے چالان ہوئے تھے انہوں نے تین کروڑ 70 لاکھ روپے واپس کردیے تھے۔

پروگرام میں شریک سینئر صحافی ارشد شریف نے بتایا ویسے تو حکومت کہتی ہے کہ ان کا اس کیس کے ساتھ کوئی لینا دینا نہیں ہے لیکن حکومت کے بندے ان کی ضمانت نہیں ہونے دے رہے۔ ڈاکٹر شاہد مسعود کی ضمانت کی مخالفت پی ٹی وی کے وکیل اور ایڈیشنل ایڈووکیٹ جنرل نے کی ہے۔ یہ دونوں لوگ حکومت کے انڈر آتے ہیں۔

خیال رہے کہ ڈاکٹر شاہد مسعود کو 23 نومبر کو پی ٹی وی کرپشن کیس میں گرفتار کیا گیا تھا۔ انہیں اپنے خیالات کے اعتبار سے پی ٹی آئی کا حامی سمجھا جاتا ہے۔

مزید : علاقائی /اسلام آباد