محکمہ جیل خانہ جات‘ اپیلیں مسترد‘ مختلف ملازمین کو سزائیں

محکمہ جیل خانہ جات‘ اپیلیں مسترد‘ مختلف ملازمین کو سزائیں

  



ملتان (خبر نگار خصو صی) ملتان ڈپٹی انسپکٹر جنرل جیل خانہ جات محسن رفیق نے گزشتہ روز ملازمین کو دی جانے والی سزاؤں کی اپیلوں پر فیصلہ دینے کیلئے اردل روم لگایا۔اردل روم میں اپیل و انضباطی کارروائی کے حوالے مختلف کیڈر کے(بقیہ نمبر56صفحہ12پر)

ملازمین پیش ہوئے۔جن کو متعلقہ جیلوں کے انتظامی افسران نے مختلف وجوہات کی بناء پر سزائیں دی تھیں۔ڈی آئی جی محسن رفیق نے اردل روم کے دوران دو ملازمین دانیال ڈیوڈ۔اور وارڈر لطیف کی کی گئی اپیلیں ٹائم بارڈ ہونے پر مسترد کردی گئیں۔سنٹرل جیل ڈیرہ غازی خان پر تعینات ہونے والا خاکروب کہ سزاء کو سنشور میں تبدیل کردیا۔وارڈر محمد ذیشان اور مبشر حسین کی اپیلیں کو مسترد کی۔اس کے علاؤہ انضباطی کارروائی کا سلسلہ میں پیش ہونے والے ڈرائیور محمد جاوید۔وارڈر خالد نواز کے غیر حاضری کی اپیلوں کو بھی سنشور کی سزاء میں تبدیل کردیا ہے۔مستری عابد حسین کو ڈیوٹی سے غیر حاضر ہونے پر اسکی سالانہ ترقی ایک سال کے لئے بند کردی ہے جبکہ ہیڈ وارڈر عبدالشکور کو سنشور کی سزاء اور ہیڈ وارڈر عبدالغفور جوکہ اس وقت ڈسٹرکٹ جیل راجن پور میں تعینات ہے۔کی تیرہ یوم کی غیر حاضری کو میڈیکل رخصت کے طور پر منظور کرلیا ہے۔ڈی آئی جی محسن رفیق کا کہنا ہے میرے دروازے ملازمین کی فلاح و بہبود کیلئے ہمیشہ کھلیں ہیں۔اگر کوئی مسلہ ہے تو مجھ سے رابطہ کریں۔

سزائیں

مزید : ملتان صفحہ آخر


loading...