گنجان آبادیوں کے ساتھ پوش علاقوں میں بھی گیس پریشر ڈاؤن

گنجان آبادیوں کے ساتھ پوش علاقوں میں بھی گیس پریشر ڈاؤن

  



لاہور(خبرنگار) ملک بھر میں بارشد اور شدید سردی کے باعث گیس کی طلب بڑھ کر رہ گئی ہے،گنجان آبادیوں کیساتھ پوش علاقوں میں بھی گیس کا پریشر 4 سے 6 گھنٹے ڈاؤن رہا، شہریوں کو کھانے تیار کرنے کے اوقات میں شدید دشواری کا سامنا کرنا پڑا جس کے باعث ہوٹلوں، تندوروں اور بیکریوں پر گزشتہ روز بھی زبردست رش رہا ہے جبکہ ایل پی جی، لکڑیوں اور کوئلہ کی قیمتیں آسمان سے باتیں کرتی رہیں اس حوالے سے سوئی گیس کمپنی کے ایم ڈی عامر طفیل کا کہنا ہے کہ گیس کمپنی کے پاس 2200 ملین کے ذخائر موجود ہیں۔ صارفین کمپریسر اور گیس ہیٹرز کا استعمال نہ کریں۔ گیزر کا بھی کم سے کم استعمال کریں۔ گھریلو صارفین پہلی ترجیح ہیں اور اس مقصد کے لئے لاہور کے صارفین سمیت پنجاب کے دیگر حصوں کے لئے گیس کی سپلائی کو بڑھایا گیاہے۔ صارفین گیس صرف کھانے تیارکرنے کے لئے استعمال کریں،جن علاقوں میں گیس کے پریشر میں کمی کی شکایات مل رہی ہیں وہاں فوری ٹیمیں روانہ کر کے گیس کی کمی کی شکایات کو دور کیا جا رہا ہے۔

مزید : میٹروپولیٹن 1