سرفراز احمد انڈر 19 کھلاڑیوں کا حوصلہ بڑھانا این سی اے پہنچ گئے

سرفراز احمد انڈر 19 کھلاڑیوں کا حوصلہ بڑھانا این سی اے پہنچ گئے

  



لاہور: (سپورٹس رپورٹر) قومی کرکٹ ٹیم کے سابق کپتان اور وکٹ کیپر بیٹسمین سرفراز نیشنل کرکٹ اکیڈمی لاہور پہنچ گئے، انہوں نے انڈر 19 کرکٹ ٹیم کے کھلاڑیوں سے ملاقات کی۔تفصیلات کے مطابق آئی سی سی انڈر 19 کرکٹ ورلڈکپ 2020ء کی تیاریوں کے لیے قومی انڈر 19 کرکٹ ٹیم کا تربیتی کیمپ یکم جنوری سے این سی اے میں جاری ہے۔ نو روزہ کیمپ میں شرکت کے بعد قومی انڈر 19 سکواڈ دس جنوری کو جنوبی افریقا روانہ ہو گا جہاں میگا ایونٹ کا آغاز 17 جنوری سے ہو گا۔یاد رہے کہ اس سے قبل پاکستان دو مرتبہ انڈر 19 کرکٹ ورلڈکپ جیت چکا ہے، پاکستان نے آخری مرتبہ آئی سی سی انڈر کرکٹ ورلڈکپ 2006ء میں جیتا تھا، جہاں قومی انڈر 19 کرکٹ ٹیم کی قیادت سرفراز احمد نے کی تھی، وکٹ کیپر بیٹسمین کی قیادت میں پاکستان نے ایونٹ کے فائنل میں روایتی حریف بھارت کو سنسنی خیز مقابلے کے بعد 38 رنز سے شکست دی تھی۔این سی اے میں انڈر 19 کرکٹ کھلاڑیوں سے ملاقات کے موقع پر سرفراز احمد کا کہنا تھا کہ آئی سی سی کرکٹ ورلڈکپ 2020ء کے لیے منتخب قومی سکواڈ میں شامل تمام کھلاڑی بہترین صلاحیتوں کے مالک ہیں اور یہ سکواڈ ورلڈکپ جیتنے کی مکمل اہلیت رکھتا ہے۔وکٹ کیپر بیٹسمین کا کہنا تھا کہ گزشتہ سال قومی انڈر 19 کرکٹ ٹیم کی کارکردگی میں تسلسل رہا، دورہ سری لنکا اور جنوبی افریقا میں کامیابی کے باعث نوجوان کھلاڑیوں کا مورال بلند ہے۔ان کا کہنا تھا کہ سکواڈ میں شامل کھلاڑیوں کی اکثریت جنوبی افریقا کے خلاف سیریز میں شامل تھی جس کے باعث انہیں کنڈیشنز سے ہم آہنگی کے لیے زیادہ وقت دکار نہیں ہو گا۔32 سالہ وکٹ کیپر بیٹسمین کا کہنا تھا کہ انڈر 19 کرکٹ،نوجوان کھلاڑیوں کے لیے قومی سکواڈ میں شمولیت کی پہلی سیڑھی ہے۔

، آئی سی سی ورلڈکپ میں اعلیٰ کارکردگی دکھانے والے کھلاڑیوں کے لیے قومی ٹیم میں جگہ بنانے کے امکانات روشن ہوں گے۔

ان کا کہنا تھا کہ میں خود، شاہین شاہ ا?فریدی اور فاسٹ باوؤلر نسیم شاہ سمیت بیشتر کھلاڑی قومی انڈر 19 کرکٹ ٹیم کے ذریعے ہی پاکستان ٹیم کا حصہ بنے۔2006ء میں کامیابی کے سفر کو یاد کرتے ہوئے کپتان سرفراز احمد کا کہنا تھا کہ ورلڈکپ یادگار تھا، فائنل میں روایتی حریف بھارت کے خلاف لو سکورنگ میچ میں کامیابی حاصل کرنا بڑی فتح تھی۔

مزید : کھیل اور کھلاڑی