سینیٹر سرفراز بگٹی کا سوئی گیس میں لوڈ شیڈنگ پر احتجاج،مستعفی ہو کر مسلح جدوجہد کی دھمکی

سینیٹر سرفراز بگٹی کا سوئی گیس میں لوڈ شیڈنگ پر احتجاج،مستعفی ہو کر مسلح ...

  



اسلام آباد(سٹاف رپورٹر) سینیٹ کی قائمہ کمیٹی برائے پٹرولیم کے اجلاس میں سینیٹر سرفراز بگٹی اور پی پی ایل حکام کے درمیان سخت جملوں کا تبادلہ ہوا، مجھے بندوق اٹھانے پر مجبور نہ کریں، اگر ایسا ہوگیا توپھر سب سے پہلے پی پی ایل حکام کے گھروں کی طرف جاؤنگا،بلوچستان کے علاقے سوئی سے پورے پاکستان کوگیس ملتی ہے وہاں کی خواتین اب بھی لکڑیاں جلاتی ہیں۔ سینیٹرمحسن عزیز کے زیر صدارت سینیٹ کی قائمہ کمیٹی برائے پٹرولیم کے اجلاس میں بلوچستان عوامی پارٹی کے سینیٹرسرفراز بگٹی نے کہا کہ بلوچستان اور سوئی کو گیس نہ ملی تو سینیٹ سے استعفیٰ دے کر آپ لوگوں کی ناک کاٹوں گااور اگر مجھے بندوق اٹھانی پڑے تو سب سے پہلے آپ لوگوں پر اٹھاؤنگا۔ انہوں نے کہا کہ ہمیں محب وطن نہ ہونے کا طعنہ بھی دیا جاتا ہے جبکہ میں حلفاً کہتا ہوں آج بھی سوئی میں ہماری خواتین لکڑیاں جلاتی ہیں اور سوئی میں جہاں گیس ہے وہاں گیس کی لوڈ شیڈنگ ہے۔سرفراز بگٹی نے کہا کہ اگر سوئی میں گیس کی لوڈ شیڈنگ نہ ختم کی گئی تو پارلیمنٹ میں احتجاج کرونگاجبکہ انہوں نے چیئرمین کمیٹی کو مخاطب کر کے کہا کہ مجھے اور میرے لوگوں کو گیس چاہئے۔ اجلاس میں پی پی ایل حکام کی جانب سے کہا گیا کہ بلوچستان میں گیس لوڈ شیڈنگ کی وجہ غیر معیاری آلات کا استعمال ہے اور لوگ پلاسٹک کے پائپ استعمال کرتے ہیں جو خطر ناک ہیں۔ 

سرفراز بگٹی/دھمکی

مزید : صفحہ آخر


loading...