’ جب ہم اقتدار میں آئیں گے تو پتا چلے گا کہ سٹریٹجی بھی کوئی چیز ہوتی ہے‘ آرمی ایکٹ میں ترمیم، نواز شریف کے قریبی ساتھی نے عارف حمید بھٹی کو کیا بتایا؟

’ جب ہم اقتدار میں آئیں گے تو پتا چلے گا کہ سٹریٹجی بھی کوئی چیز ہوتی ہے‘ ...
’ جب ہم اقتدار میں آئیں گے تو پتا چلے گا کہ سٹریٹجی بھی کوئی چیز ہوتی ہے‘ آرمی ایکٹ میں ترمیم، نواز شریف کے قریبی ساتھی نے عارف حمید بھٹی کو کیا بتایا؟

  



لاہور (ڈیلی پاکستان آن لائن) صحافی عارف حمید بھٹی کا کہنا ہے کہ آرمی ایکٹ میں ترمیم پر ووٹ ڈالنے کے بعد ن لیگ کیلئے آنے والے وقت میں نتائج آئیں گے، نواز شریف کے قریبی ساتھی نے انہیں بتایا ہے کہ جب وہ اقتدار میں آئیں گے تو پتا چلے گا کہ سٹریٹجی بھی کوئی چیز ہوتی ہے۔

نجی ٹی وی جی این این کے پروگرام میں گفتگو کرتے ہوئے عارف حمید بھٹی نے کہا کہ نواز شریف کے بہت قریبی دوست جو ان کے محسن بھی ہیں ، میری ان سے بات ہوئی انہوں نے کہا کہ اس فیصلے کے نتائج کچھ لوگوں کیلئے اچھے ہوسکتے ہیں، ہمارے لیے نتائج آنے والے ہیں۔ جب ہمارے پاس اقتدار آئے گا تو آپ کو پتا چل جائے گا کہ کچھ سٹریٹجی بھی ہوتی ہے۔

عارف حمید بھٹی نے کہا کہ آرمی ایکٹ کثرتِ رائے سے منظور ہونا خوش آئند بات ہے، خطے میں جو صورتحال ہے ہم کسی ایڈوینچر کے متحمل نہیں ہوسکتے۔ انہوں نے کہا کہ مسلم لیگ ن کے اندر سے جو باتیں آرہی ہیں دراصل وہ کہلوائی جارہی ہیں کیونکہ ان کا ’ووٹ کو عزت دو‘ کا بیانیہ تھا۔ کچھ عرصہ پہلے ہونے والے رابطوں میں میاں نواز شریف اور میاں شہباز شریف نے یقین دہانی کرادی تھی کہ اسمبلی میں وہ آرمی ایکٹ کے ایشو پر کوئی بحث نہیں کریں گے۔

مسلم لیگ ن کی پارلیمانی پارٹی کے اجلاس میں میاں جاوید لطیف نے خواجہ آصف کے سامنے سوال اٹھایا تھا کہ آرمی ایکٹ میں ترمیم کی غیر مشروط حمایت کے بعد ہم ووٹر کو کیا جواب دیں گے؟ عارف حمید بھٹی نے اس پر تبصرہ کرتے ہوئے کہا کہ ضابطے کے تحت الیکشن میں 40 لاکھ روپے خرچ کیے جاسکتے ہیں لیکن جاوید لطیف نے الیکشن میں 39 لاکھ 99 ہزار 999 روپے خرچ کیے، کوئی یہ نہیں کہہ سکتا کہ انہوں نے ووٹرز میں موٹرسائیکلیں اور پیسے بانٹے ، یہ بے بنیاد بات ہے۔

مزید : علاقائی /پنجاب /لاہور