شہر میں ملنے والی مسخ شدہ لاشوں کی تعداد بڑھ گئی ، 80فیصد لاوارث تدفین

شہر میں ملنے والی مسخ شدہ لاشوں کی تعداد بڑھ گئی ، 80فیصد لاوارث تدفین

  

لاہور (اپنے کرا ئم ر پو رٹر سے) صو با ئی دا را لحکومت میں مسخ شد ہ نعشیں ملنے میں بتدریج اضافہ ہو نے لگاہے ۔ روا ں سال2بچو ں سمیت120ا فرا د کی مسخ شد ہ نعشیں بر آ مد ہو ئیں۔رواں سال میں مسخ شدہ لاشوں کی تعداد میں اضافے سے لاہور پولیس کی کارکردگی کیلئے سوالیہ نشان ہے ۔ پولیس چند ایک کے سوا کسی بھی مسخ شدہ لاش کے لواحقین تلاش کرنے اور ملزمان کو گرفتار کرنے میں کامیاب نہیں ہو سکی،80فیصد مسخ شدہ لاشوں کو لاوارثوں کے قبرستان میں دفنا دیا جاتا ہے۔مسخ شدہ لاشوں کے حوالے سے پولیس تفتیش بڑھانے اور لواحقین کی تلاش کیلئے پولیس کی کارکردگی میں اضافے پر تاحال غور نہیں کیا جا سکا۔ تفصیلات کے مطابق شہر میں مسخ شد ہ نعشیں ملنے کی شر ح میں بتدریج اضافہ ہو نے لگاہے جبکہ لاہور پولیس کے تفتیش کار بھی مسخ شد ہ نعشو ں کے مقدمات میں لواحقین تک پہنچنے کی کوشش ہی نہیں کرتے ،معلوم ہوا ہے کہ رواں سال کے دوران لاہور میں مسخ شد ہ نعشوں کی مجموعی تعداد 120 ہے جبکہ پولیس تاحال چند ایک کیسز کو حل کرنے کے علاوہ متعد د میں ناکام نظرآئی ہے ۔ذرائع کے مطابق پولیس مسخ شد ہ نعش کے مقد مہ کی تفتیش کرنے اور ملزم تک پہنچے کی بجائے لاش کا پوسٹ مارٹم کروانے کے بعد کیس کی فائل بند کر دیتی ہے او ر نامعلوم افراد کے خلاف مقدمہ درج کر لیا جاتا ہے ۔معلوم ہواہے کہ چند روز قبل شاہدرہ کے علاقے میں آٹھ سالہ بچی مسخ شد ہ نعش بر آمد ہو ئی تھی جس کی شنا خت وقوعہ سے تین دن بعد مقدس کے نام سے ہوگئی، وقوعہ کے روز آٹھ سالہ مقدس کی لا ش خالی پلاٹ سے چا در میں لپٹی لاش برآمد ہوئی تھی۔پولیس کاکہناتھاکہ مقدس کو اسکے والد سعید اوراسکی سوتیلی ماں نائلہ نے تشدد کا نشانہ بنانے کے بعدقتل کیا۔نعش کوچادر میں لپیٹ کرخالی پلاٹ میں پھینک دیاگیا۔پولیس کا کہناتھا کہ سعید نے نائلہ سے تیسری شادی کی تھی اورنائلہ سوتیلی بیٹی کوظلم کانشانہ بناتی تھی۔پولیس کا کہنا ہے کہ ملزمان کی گرفتاری کیلئے چھاپے مارے جارہے ہیں۔دوسرا واقعہ باغبانپورہ کی یونین کونسل 130 کے چیئرمین شہباز چاندی کا 4سالہ بیٹا شعیب جو 6روز قبل گھر سے پراسرار طو ر پر لا پتہ ہو گیا جس کی ہمسائے کے گھر سے مسخ شد ہ نعش بر آمد ہو ئی ۔با غبا نپو ر ہ کے علاقہ جٹاں والہ سکیم کے قریب پو لیس کو 30سالہ خاتون کی مسخ شد ہ نعش ملی ، پو لیس نے شنا خت کے لئے مقامی مساجد میں اعلا ن بھی کروا ئے ۔گلشن راوی کے علاقہ میں علاقہ گندے نالے سے 25سالہ نوجوان کی مسخ شد ہ نعش ملی ، پو لیس نے موقع پر پہنچ کر نعش کی شنا خت کے لئے مقامی مساجد میں اعلا ن بھی کرو ائے لیکن شنا خت نہ ہو سکی ۔ کاہنہ کے علاقے گھنکرسے 23 سالہ شخص کی مسخ شد ہ نعش بر آمد بھی ہو ئی ہے ۔ پو لیس اعدا د شمار کے مطا بق بچو ں سمیت 20 افرا د ایسے بھی تھے جو کچھ عر صہ سے لا پتہ تھے اور ان کی نعشیں بر آ مد ہو نے کے بعد ان کی شنا خت ہو ئی ۔

مزید :

علاقائی -