حمد بن جاسم اپنے سابق عہدوں کی مناسبت سے پاکستانی سفارت خانے نہیں جا سکتے:جیونیوز

حمد بن جاسم اپنے سابق عہدوں کی مناسبت سے پاکستانی سفارت خانے نہیں جا ...
حمد بن جاسم اپنے سابق عہدوں کی مناسبت سے پاکستانی سفارت خانے نہیں جا سکتے:جیونیوز

  

دوحہ(ڈیلی پاکستان آن لائن) قطری شہزادے حمد بن جاسم کی پاکستانی سفارتخانے نہ آنے کی وجوہات سامنے آگئیں۔ حسین نواز کی جے آئی ٹی تحقیقات کے دوران تصویر لیک ہونے کی وجہ سے قطری حکام احتیاط سے کام لے رہے ہیں۔ جبکہ وہ اپنے سابق عہدوں کی وجہ سے پاکستانی سفارتخانے میں اپنا بیان ریکارڈ کرانے نہیں جا سکتے۔

دھاندلی اور احتساب کی آڑ میں سازشیں ہو رہی ہیں،مخالفین جے آئی ٹی کے پیچھے چھپنے کی بجائے میدان میں آکر مقابلہ کریں: نواز شریف

نجی ٹی وی چینل جیو نیوز نے اپنے ذرائع کے حوالے سے دعویٰ کیا ہے کہ حمد بن جاسم قطر کے وزیراعظم اور وزیر خارجہ رہے ہیں۔ اپنے سابق عہدوں کی مناسبت سے بھی وہ کسی سفارتخانے نہیں جاسکتے۔ قطری حکام نے شہزادے لو حسین نوازکی تصویرلیک کے معاملے سے آگاہ کررکھاہے۔ حمد بن جاسم اپنی ویڈیویاتصاویرسے متعلق جے آئی ٹی پراعتماد کے لئے تیارنہیںاور حسین نوازکی تصویرلیک بھی حمد بن جاسم کے پاکستان نہ آنے کا سبب بنی ۔جے آئی ٹی نے قطری شہزادے کو خط کے ذریعے 5سے6گھنٹے پاکستانی سفارتخانے میں بیان ریکارڈ کرنے کے لیے آنے کو کہا تھا اور ساتھ ہی جے آئی ٹی نے حمدبن جاسم کوخط میں لکھاسفارتخانے میں ان پرپاکستانی قوانین کااطلاق ہوگا۔ جبکہ قطری شہزادے نے جواب دیاکہ جے آئی ٹی ارکان گھرپرآئیں توسوالات کاتسلی بخش جواب دوں گا۔

مزید :

قومی -