شدید بارشوں کی پیش گوئی!

شدید بارشوں کی پیش گوئی!

محکمہ موسمیات کے مطابق پیر سے جمعرات تک شمال سے جنوبی پنجاب تک تیز اور موسلا دھار بارشوں کا امکان ہے۔ اس سلسلے میں ڈی ایم اے کی طرف سے بھی الرٹ جاری کیا گیا ہے۔ گزشتہ دو روز کے دوران بھی پشاور سے لاہور تک ہونے والی بارش کو مون سون کی ابتدا کہا گیاہے، اس بارش سے درجہ حرارت میں کمی ہوئی تاہم حبس میں اضافہ ہو گیا جو موسم کی تبدیلی کا خاصا بن چکا ہے۔اس سیزن میں زیادہ بارشوں کے حوالے سے پہلے بھی خبردار کیا جاتا رہا ہے لیکن ابھی تک ادارے سوئے ہوئے ہیں، نہ تو نکاسی آب کے نالوں اور نالیوں سے کچرا نکالا گیا اور نہ ہی نکاسی آب کے راستوں سے رکاوٹیں دور کی گئی ہیں، نکاسی آب کے ذمہ دار محکموں کی یہ سست روی اور کام چوری پہلی بار نہیں ہر سیزن میں اخباری اور میڈیا میں بیانات کے ذریعے جمع خرچ کیا جاتا ہے لیکن عملی کام ضرورت کے مطابق نہیں ہوتا، حتیٰ کہ سڑکوں کے جن مقامات پر بارش کا پانی سالوں سے کھڑا ہوتا اور گزرنے والوں کے لئے پریشانی اور دشواری کا سبب بنتا ہے۔ اس کا بھی کوئی مستقل حل نہیں کیا گیا اور اس برسات میں بھی یہ حصے ڈوبے رہیں گے اس کے علاوہ بڑا خطرہ خطرناک قرار دیئے گئے مکانوں کے گرنے کا ہے۔ان میں لوگ اپنی جان کی پروا کئے بغیر رہنے پر بوجوہ مجبور ہیں، انتظامیہ اور حکومت ان کو نوٹس دے کر فرض ادا کر دیتی ہے۔ ان کی حفاظت کے لئے کچھ نہیں کیا جاتا۔اس سیزن میں چونکہ شدید بارشوں کی آمد سے بار بار خبردار کیا جا رہا ہے اس لئے تمام متعلقہ محکموں اور عوام کا اپنا اپنا فرض ہے کہ تمام حفاظتی اقدامات کر لئے جائیں کہ جانی نقصان نہ ہو۔

مزید : رائے /اداریہ