طورخم میں کسٹم حکام اور کلئےرنس اےجنٹس کے درمےان مذاکرات ناکام، ہڑتال جاری

  طورخم میں کسٹم حکام اور کلئےرنس اےجنٹس کے درمےان مذاکرات ناکام، ہڑتال جاری

خےبر(صباح نیوز)پاک افغان بارڈر طورخم مےں کسٹم کلئےرنس اےجنٹس کا اپنے مطالبات کے حق مےں ہڑتال دوسرے روز بھی جاری رہی ،پاک افغان بارڈر کے دونوں اطراف ہزاروں مال بردار گاڑیاں پھنس گئیں ، کسٹم حکام اور کلئےرنس اےجنٹس کے درمےان مذاکرات ناکام ہو گئے ، افغانستان کو ہر قسم کی سپلائی معطل کر دی گئی ۔ تفصیلات کے مطابق پاک افغان بارڈر طورخم مےں کسٹم کلئےرنس اےجنٹس کا اپنے مطالبات کے حق مےں دوسرے روز بھی ہڑتال جاری ہے ۔ جس کی وجہ سے بارڈر کے دونوں اطراف گاڑےوں کی لمبی قطاریں لگ گئی ہے ۔ کسٹم کلئےرنس اےجنٹس نے کسٹم حکام کو پندرہ مطالبات پےش کئے ہے ۔ جس مےں سب سے پہلے نےٹ بلا تعطل بحال رکھنے،فروٹس اور سبزےوں کی کلئےرنس کے لئے وقت بڑھانے،اےمپورٹ رمےنل اےکسپورٹ گےٹ اوٹ کی اجازت ;787667;کو نہ دےنے،اےمپورٹ اور اےکسپورٹ کی valueکم کرنے،اےگزامےنےشن اےک طرےقے سے کرنے،مکس ائےٹم مےں ڈکلےرےشن رےشو پر کرنے،وی باک کا ٹوکن 500کی بجائے 250مےں بحال کرنے کے علاوہ کئی دےگر مطالبات بھی پےش کئے ۔ ہڑتال کے دوسرے روز شدےد گرمی مےں فرےش فروٹس اور سبزےاں خراب ہونے کا خدشہ ہے ۔ آئے روز ہڑتالوں سے پاک افغان تجارت مےں نماےاں کمی آئی ہے ۔

ہڑتال جاری

مزید : صفحہ آخر


loading...