صادق سنجرانی کو ہٹا ٹاجمہوریت  کے خلاف سازش ہے، سینیٹر شبلی فراز

صادق سنجرانی کو ہٹا ٹاجمہوریت  کے خلاف سازش ہے، سینیٹر شبلی فراز

اسلام آباد(آن لائن)  سینیٹ میں قائد ایوان سینیٹر شبلی فراز نے کہا کہ چیئرمین سینیٹ صادق سنجرانی بڑی روانی اور سنجیدگی سے ایوان کو چلارہے ہیں  انہیں  عہدہ سے ہٹانے کوجمہوریت کے خلاف سازش سمجھا جائے گا،  کیونکہ اس پلیٹ فارم سے بڑے پیمانے پر قانون سازی ہوئی ہے۔ نجی ٹی وی  سے گفتگو کرتے ہوئے  اپوزیشن جماعتوں کو تنقید کا نشانہ بناتے ہوئے کہا کہ  اپوزیشن جماعتیں چیئرمین سینیٹ کو ہٹانے کی    اس لیئے بات کر رہے ہیں  کیونکہ وہ بہترین قومی مفاد میں کام کررہے ہیں۔انہوں نے کہا کہ حزب ا ختلاف کی جماعتیں آصف علی زرداری اور نوازشریف کے خلاف احتساب کے عمل کو روکنے کے لئے دباؤ کی حکمت عملی استعمال کر رہی ہیں کیونکہ دونوں بدعنوانی کے الزامات میں جیل میں قید ہیں۔ شبلی فراز نے کہا کہ پاکستان تحریک انصاف نے سینیٹ کے چیئرمین کے انتخاب میں صادق سنجرانی کی حمایت کی تھی کیونکہ ہم چاہتے تھے کہ بلوچستان سے کسی شخص کو یہ عہدہ ملے حالانکہ سنجرانی پی ٹی آئی سے تعلق نہیں رکھتے۔انہوں نے کہا کہ پاکستان پیپلز پارٹی نے سینیٹ کی چیئرمین کے لئے رضا ربانی، رحمان ملک اور سلیم مانڈوی والا سمیت تین نام   دیئے جبکہ پاکستان مسلم لیگ نواز ا بھی تک کسی ایک نام پر بھی متفق ہونے میں ناکام رہی ہے۔ انہوں نے  کہا کہ صادق سنجرانی کو عہدہ سے ہٹانے کوجمہوریت کے خلاف سازش سمجھا جائے گا۔ 

سینیٹر شبلی فراز

مزید : صفحہ آخر


loading...