ملکی معیشت تباہی کے دہانے پر پہنچ چکی ، مولانا لطف الرحمان

ملکی معیشت تباہی کے دہانے پر پہنچ چکی ، مولانا لطف الرحمان

ڈیرہ اسماعیل خان( بیورورپورٹ) خیبرپختونخوااسمبلی میں جمعیت علماءاسلام کے پارلیمانی لیڈروضلعی امیرمولانالطف الرحمان نے کہاہے کہ سلیکٹڈوزیراعظم عمران خان کی طرف سے اپوزیشن پردباﺅڈالنے کے لیے اپوزیشن خلاف یکطرفہ مقدمات کے اندراج اوراپوزیشن کوہراساں کرنے کے واقعات پاکستانی عوام کے لیے ایک سوالیہ نشان ہیں ۔ حکمرانوں کے اس طرز عمل سے ادارے متنازع بن رہے ہیں ۔کمزورفیصلوں کی وجہ سے پاکستانی معیشت تباہی کے دہانے پر پہنچ چکی ہے ۔ ان خیالات کااظہارانہوںنے شورکوٹ میں میڈیا کے نمائندوں سے گفتگوکے دوران کیا۔مولانالطف الرحمان نے کہاکہ یہ پہلی مرتبہ ہورہاہے کہ اپوزیشن کے لوگوں کودبانے اوراپنی بات منوانے کے لیے زبردستی یادھمکیوں کاسہارالیاجارہاہے ۔کیاحکمران اپنے اس طرز عمل سے اپوزیشن سے اپنی بات منوالیں گے جوایک سوالیہ نشان ہے ۔ انہوںنے کہاکہ سابقہ حکومتوں کی طرف سے بجٹ کی منظوری کے کچھ عرصہ کے بعدپتہ چلتاتھا کہ بجٹ کس قسم کا تھا لیکن پی ٹی آئی کی حکومت واحدحکومت ہے کہ ان کی ناکام معاشی پالیسیوں کی بدولت موجودہ پیش ہونے والے بجٹ کے ساتھ ہی عوام کی ٹیکسوں اورمہنگائی کی وجہ سے چیخیں نکل گئی ہیں ۔آنے والی حکومتیں پی ٹی آئی کی ان ناکام پالیسیوں کی وجہ سے اورملکی معیشت کو کس طرح سہارادے پائینگی اس پرہمیں تشویش ہے۔

مزید : پشاورصفحہ آخر


loading...