4ہزار سے زائد ماہانہ فیس پر نجی سکول اور ازسرنو واؤ چرجاری کریں گے

4ہزار سے زائد ماہانہ فیس پر نجی سکول اور ازسرنو واؤ چرجاری کریں گے

  

لاہور(نامہ نگارخصوصی)لاہور ہائی کورٹ میں پرائیویٹ سکولز میں اضافی فیسیوں کی وصولی پر توہین عدالت کی درخواست کی سماعت کے دوران سی ای او ایجوکیشن نے فیسوں میں 5 فیصد سے زائد اضافہ منسوخ کرنے کی رپورٹ پیش کردی،مسٹر جسٹس ساجد محمود سیٹھی نے فریقین کے وکلا ء کومزید دلائل کے لئے طلب کرتے ہوئے مزیدسماعت13 جولائی پر ملتوی کردی،درخواست میں سیکرٹری سکول ایجوکیشن، کمشنر لاہور، ایل جی ایس اور بیکن ہاؤس سکول مالکان کو فریق بنایا گیاہے،کیس کی سماعت شروع ہوئی تو سی ای او ایجوکیشن زاہد پرویز اختر نے رپورٹ پیش کی،ڈسٹرکٹ رجسٹریشن اتھارٹی کے فیصلے بارے سی ای او ایجوکیشن نے عدالت کو آگاہ کرتے ہوئے بتایا کہ 4ہزار سے زائد فیس پر سکولز ازسر نو واؤچر جاری کریں گے، فیسوں میں 8 فیصد اضافہ کرنے کا نوٹیفیکیشن واپس لے لیا گیا ہے،کوئی سکول 5فیصد سے زیادہ فیس میں اضافہ نہیں کرسکتا،درخواست گزار وں ندا عالم، الطاف احمد سمیت دیگر طلباء کی طرف سے صفدر شاہین پیرزادہ ایڈووکیٹ نے موقف اختیار کیا کہ پرائیوٹ سکول مالکان نے طلباء کو8 فیصد اضافی فیس کے واؤچر جاری کئے ہیں، سپریم کورٹ نے 5 فیصد فیصد اضافے کی اجازت دی تھی، سکول مالکان نے فیس جمع نہ کروانے کی صورت میں آن لائن کلاسز کے لئے پورٹل بند کرنے اوراگلی کلاسز میں ترقی نہ دینے کی دھمکی دی ہے۔

نجی سکول،فیس

مزید :

صفحہ آخر -