پی ٹی آئی کا کے الیکٹرک کیخلاف ہیڈ آفس کے باہر دھرنا

پی ٹی آئی کا کے الیکٹرک کیخلاف ہیڈ آفس کے باہر دھرنا

  

کراچی (آن لائن)پی ٹی آئی کی جانب سے کے الیکٹرک کے خلاف کے لیکٹرک ہیڈ آفیس کے باہر دھرنا دیا گیا۔ احتجاجی دھرنے میں پی ٹی آئی کے مرکزی رہنما و پارلیمانی لیڈر حلیم عادل شیخ اراکین سندھ اسمبلی نے شرکت کی۔ پی ٹی آئی کے اراکین اسمبلی ڈاکٹرسعید آفریدی، شاھنواز جدون، راجا اظھر، رابستان خان، و دیگر پی ٹی آئی رہنماؤں نے دھرنے میں شرکت کی۔ احتجاجی دھرنے میں پی ٹی آئی رہنماؤں نے کے الیکٹرک کے خلاف نعرے بازی بھی کی۔ میڈیا سے بات چیت کرتے ہوئے پی ٹی آئی مرکزی رہنما و پارلیمانی لیڈر حلیم عادل شیخ نے کہا کے الیکٹر ک میں ایسے لوگ شامل ہیں جن کے منہ کو خون لگ چکا ہے، کے الیکٹرک نے کراچی کی عوام کا خون چوس رہی ہے۔ ٹوٹی ہوئی تار کی وجہ سے کرنٹ لگنے سے پچھلی بارشوں میں بڑے حادثات ہوئے۔کے الیکٹرک نے جو وعدے کئے تھے ایک بھی پورا نہیں ہوا نہ انفرااسٹریکچر پر خرچ کیا گیا۔ ہم آج اس قاتل، چور اور کراچی کی دشمن کے الیکٹرک سے حساب مانگ رہے ہیں۔ سعید غنی اور پیپلزپارٹی والے کہتے ہیں کے الیکٹرک مرکزی کے کہنے پر چلتی ہے۔ 2009 میں صوبے اور وفاق میں پ پ کی حکومت تھی ابراج گروپ کو یہ کمپنی پیپلزپارٹی نے 2009 میں دی تھی۔ پاکستان کی تاریخ میں بڑے فراڈوں میں سے کے الیکٹرک کا بھی ایک بڑا فراڈ ہے۔ کے الیکٹرک کی مکمل فرانزک آڈٹ کرائی جائے، 2009 سے اور اس سے پہلی کی بھی آڈٹ کرائی جائے کے الیکٹرک لوڈ شیڈنگ فوری ختم کرے۔ ہم سارے اراکین آج سراپا احتجاج ہیں۔

پی ٹی آئی دھرنا

مزید :

صفحہ آخر -