شجاع آباد،5بچوں کی ماں کے دو شوہر،نکاح نامے تھانے پیش

شجاع آباد،5بچوں کی ماں کے دو شوہر،نکاح نامے تھانے پیش

  

شجا ع آباد (نمائندہ خصوصی) آشنا کے ساتھ فرار ہونے والی پانچ بچوں کی ماں کے دو شوہرسامنے آگئے دعویدار دونوں نے ہی تھانہ راجہ رام میں نکاح نامے پیش کر دیئے پہلے شوہر نذیر کی درخواست پر تھانہ راجہ رام پولیس نے مدعی نذیر احمد سے مال پانی لے کر نذیراحمد کی اہلیہ شہناز اور اس کے آشنا عبدالرشید کوگرفتار کر کے تھانہ راجہ رام لے آئی تو آشنا عبدالرشید نے تھانہ (بقیہ نمبر31صفحہ6پر)

میں نکاح نامہ پیش کر دیا نکاح نامہ میں تاریخ 28-5-20درج تھی جبکہ اس کہ اس کے پہلے شوہر نذیر احمد کھوکھر کے نکاح نامہ میں تاریخ 29-4-20درج ہے اس طرح سے 29روز بعد دوسرا نکاح پڑھایادیا گیا تھانہ راجہ رام پولیس نے رشوت وصول کر کے دونوں کو چھوڑ دیاچک سردارپور موضع شاہ پور ابھا تحصیل شجاع آباد کے رہائشی نذیر احمد کھوکھر نے تھانہ راجہ کے ایس ایچ او کو درخواست دی کہ میرا نکاح شہناز بی بی بیوہ دختر محمد افضل کھوکھر سے مورخہ 29-4-20 کو ہوا بعد میں معلوم ہوا کہ شہناز بی بی بد کردارعورت ہے شہناز بی بی کو نا جائز مراسم قائم کرنے سے منع کیا مگر وہ جھوٹے وعدے کرتی رہی مورخہ 26-5-20کو ملازمت کے سلسلے میں شہرشجاع آباد تھا صبح دس بجے دن عبدالرشید تین نا معلوم افراد سفید مہران کارمیں آئے گھر میں گھس گئے جبکہ پسران مدرسے میں پڑھنے گئے ہوئے تھے گھر خالی پاکر نقدی کپڑے طلائی زیورات وغیر ہ لے گئے تھانہ راجہ رام پولیس نے تاحال مقدمہ درج نہیں کیا نذیر احمد کھوکھر نے الزام عائد کیا ہے کہ تھانہ راجہ رام پولیس ملزمان سے مل گئی ہے اعلیٰ حکام نوٹس لے کر مقدمہ درج کرائیں اس ضمن میں ایس ایچ او تھانہ راجہ رام سے فون پر موقف لیا گیا جنہوں نے واقعہ سے لا علمی کا اظہارکیا۔

دو شوہر

مزید :

ملتان صفحہ آخر -