بھارت کے مقامی گاﺅں میں کھیلے گئے میچ کو سری لنکن لیگ کے ساتھ جوڑ کر لائیو سٹریم کر کے جواءکرانے میں ملوث ایک شخص گرفتار، حیران کن تفصیلات بھی سامنے آ گئیں

بھارت کے مقامی گاﺅں میں کھیلے گئے میچ کو سری لنکن لیگ کے ساتھ جوڑ کر لائیو ...
بھارت کے مقامی گاﺅں میں کھیلے گئے میچ کو سری لنکن لیگ کے ساتھ جوڑ کر لائیو سٹریم کر کے جواءکرانے میں ملوث ایک شخص گرفتار، حیران کن تفصیلات بھی سامنے آ گئیں

  

نئی دہلی (ڈیلی پاکستان آن لائن) کورونا وائرس کی وباءمیں بھی بھارتی فکسرز سرگرم ہو گئے اور بھارت کے مقامی گاﺅں میں کھیلے گئے ٹی 20 میچ پر فکسنگ کے الزام میں ایک شخص کو گرفتار کرلیا گیا ہے۔

بھارتی میڈیا کے مطابق موہالی میں ٹی 20 میچ کے دوران فکسنگ کے الزام میں پنجاب پولیس نے رویندر ڈانڈی وال نامی فکسر کو گرفتار کر لیا ہے جس نے جھانسہ دے کر موہالی میں کھیلے گئے میچ کو سری لنکا کی لیگ کیساتھ جوڑ کر لائیو سٹریم کیا۔ فکسر رویندر کا تعلق راجستھان سے بتایا جارہا ہے اور وہ ماضی میں بھی جعلی ٹورنامنٹس کے انعقاد کا ذمہ دار بتایا جاتا ہے۔

بھارتی میڈیا کے مطابق رویندر ڈانڈی وال متعدد جعلی ٹورنامنٹ سے پیسہ بنا چکا ہے جبکہ پولیس کا کہنا ہے کہ اس واقعے میں ملوث مزید منتظمین اور کھلاڑیوں کی تلاش بھی کی جا رہی ہے کیونکہ بھارت میں سٹے بازی ایک غیر قانونی عمل ہے۔ موہالی پولیس کے چیف کلدیپ سنگھ چہل نے بتایا کہ یہ میچز آن لائن بیٹنگ کے مقصد سے منعقد کئے گئے اور سری لنکا کی ٹیمیں ہونے کا بہانہ کیا گیا۔

واضح رہے کہ اس سے قبل انڈین پریمیر لیگ (آئی پی ایل) میں بھی فکسنگ کے الزامات لگ چکے ہیں، فکسنگ کے الزام پر آئی پی ایل کی ایک ٹیم چنائی سپر کنگز پر بھی پابندی عائد کردی گئی تھی۔ اس سے قبل آئی سی سی عہدیدار نے بھی اعتراف کیا تھا کہ میچ فکسنگ کے تانے بانے بھارت سے ملتے ہیں، فکسنگ کا ایک بڑا نیٹ ورک بھارت میں موجود ہے۔

مزید :

کھیل -