پاکستان فیڈرل یونین آفکالمسٹ نے بجٹ کو مسترد کردیا

پاکستان فیڈرل یونین آفکالمسٹ نے بجٹ کو مسترد کردیا

  



(پ ر) ’’پاکستان فیڈریل یونین آف کالمسٹ‘‘ (پی ایف یو سی) کے جنرل سیکرٹری فرخ شہباز وڑائچ اور سیکرٹری انفارمیشن و کوآرڈینیشن محمد نورالہدیٰ نے وفاقی بجٹ کو مایوس کن قرار دیتے ہوئے اسے مسترد کیا اور کہا ہے کہ اسحق ڈار کا تیار کردہ بجٹ عوام کی مشکلات ، مایوسی اور بے چینی میں اضافہ کرے گا ۔ انہوں نے کہا کہ ملک میں 11 کروڑ عوام پہلے ہی خط غربت سے نیچے زندگی بسر کررہے ہیں

، ان حالات میں حالیہ بجٹ کے آفٹر شاکس ان سمیت ہر طبقے کو بھگتنے پڑیں گے جس کے نتائج کسی صورت ملک و قوم کیلئے بہتر ثابت نہیں ہوں گے ۔

انہوں نے کہا کہ بجٹ بناتے ہوئے مذکورہ 11 کروڑ عوام مشکلات کو مدنظر نہیں رکھا گیا اور ہر سال کی طرح اس مرتبہ بھی ٹیکسوں پر انکریمنٹ لگاتے ہوئے سفید پوش طبقے کے زخموں پر نمک پاشی کی گئی ۔ پی ایف یو سی کے عہدیداروں نے مزید کہا کہ موجودہ انکریمنٹل بجٹ کسی صورت بھی ملک و قوم کے بہترین مفاد میں نہیں ہے ۔ انہوں نے سرکاری ملازمین کی تنخواہوں میں تضاد کو بھی شدید تنقید کا نشانہ بناتے ہوئے کہا کہ اگر وفاقی سیکرٹریوں کی تنخواہوں میں 100 فیصد اضافہ کیا جاسکتا ہے تو عام سرکاری ملازم کو کیوں مہنگائی کی چکی میں پسنے پر مجبور کیا جارہا ہے ۔ انہوں نے کہا کہ اگر حکومت نے بجٹ بنانے سے قبل ماہرین سے آراء لی ہوتیں تو آج بجٹ سے عوام دشمنی کی بُو نہ آرہی ہوتی ۔ انہوں نے نئے ٹیکسوں کی بھرمار اور پرانے ٹیکسوں میں اضافے ، بجٹ میں بلوچستان کے کم حصے اور شعبہ صحت کے بجٹ پر بھی شدید تشویش کا اظہار کرتے ہوئے اسے حکومت کی صوبہ بلوچستان اور شعبہ صحت میں عدم دلچسپی سے عبارت کیا ہے ۔

مزید : میٹروپولیٹن 4


loading...