دنیا کے 20 آلودہ ترین دریاؤں میں سے 13 بھارت میں ہیں

دنیا کے 20 آلودہ ترین دریاؤں میں سے 13 بھارت میں ہیں

  



نئی دلی (نیوز ڈیسک) بھارت کے دعووں پر نظر ڈالیں تو یوں لگتا ہے کہ یہ ملک چین تو کیاساری دنیا سے آگے نکل رہا ہے لیکن جب حقائق پر نظر ڈالیں تو صورتحال انتہائی شرمناک نظر آتی ہے۔ ماحولیاتی آلودگی کے بارے میں بھی اکثر یہ تاثر دیا جاتا رہا ہے کہ اس معاملے میں چین سر فہرست ہے لیکن ایک بین ا لاقوامی ادارے کی تازہ ترین رپورٹ نے ایک دفعہ پھر بھارتی دعووں کی قلعی کھول دی ہے اور یہ افسوسناک بات سامنے آئی ہے کہ دنیا کے 20 آلودہ ترین دریاؤں میں سے 13 بھارت میں ہیں جبکہ آلودہ شہروں اور آلودہ ماحول کے اعتبار سے بھارت صف اول میں ہے۔ بھارت چین کو اپنا حریف قرار دیتا ہے اور ہر معاملے میں اپنا مقابلہ اس کے ساتھ کرتا ہے لیکن اس رپورٹ کے مطابق آلودہ دریاؤں میں سے صرف تین چین میں ہیں۔ بھارت میں دریاؤں کی آلودگی کی وجہ سے اس کے شہریوں کی اوسط عمر میں 3.2 سال کی کمی ہو چکی ہے اور تقریباً 66 کروڑ افراد آلودہ دریاؤں سے براہ راست متاثر ہو رہے ہیں۔ بھارتی دریا گنگا اور جمنا دنیا کے 10 آلوودہ ترین دریاؤں میں شامل ہو چکے ہیں۔ فروری میں کئے جانے والے ایک تجزیے کے مطابق بھارتی گجرات کا علاقہ واپی اور اڑیسہ کا سکیندہ دنیا کے آلودہ ترین علاقے ہیں۔ فضائی آلودگی کا سبب بننے والی کاربن گیس خارج کرنے والے ممالک میں بھی بھارت تیسرے نمبر پر آ گیا ہے۔ اخبار ہندوستان ٹائمز میں شائع ہونے والی ایک رپورٹ میں یہ اعتراف کیا گیا ہے کہ اگرچہ بھارت ہر معاملے میں چین کے مقابلے کا دعویٰ کرتا ہے لیکن دونوں ممالک کا بنیادی فرق یہ ہے کہ چین نے گزشتہ چند سالوں کے دوران آلودگی پر قابو پانے میں نمایاں پیش رفت کی ہے لیکن بھارت کا معاملہ الٹ ہے، ہر گزرتے دن کے ساتھ صورتحال مزید خراب ہوتی جارہی ہے۔ سال 2000 سے لے کر اب تک چین کی آلودگی میں 40 فیصد کمی آئی ہے جبکہ اسی عرصے میں بھارت کی آلودگی میں 20 فیصد اضافہ ہو چکا ہے۔ ادارے سینٹرل پلوشن کنٹرول کی طرف سے کئے جانے والے ایک تین سالہ سروے میں یہ بھی معلوم ہوا ہے کہ بھارت کے 290 دریاؤں کے 60 فیصد حصے شدید ترین نامیاتی آلودگی کا شکار ہیں۔ جن دریاؤں کا معائنہ کیا گیا ان کی 8400کلومیٹر لمبائی آلودگی سے متاثر پائی گئی۔ بین الاقوامی پیمانے پر ہونے والی متعدد حالیہ تحقیقات نے آلودگی کے معاملے میں بھارت کو سر فہرست قرار دیا ہے۔ دہلی دنیا کا آلودہ ترین شہر قرار پایا ہے، جمنا آلودہ ترین دریا قرار پایا ہے، جبکہ آلودگی کی وجہ سے بھارت کے جنگلات میں شیر، سرخ پانڈا، کالا ہرن اور گینڈے جیسے جانوروں کی نسل بھی معدوم ہو رہی ہے۔

مزید : علاقائی