گن شپ بھارتی ہیلی کاپٹر جسے پاک فوج نے اترنے پر مجبور کردیا، آج بھی گلگت میں موجود

گن شپ بھارتی ہیلی کاپٹر جسے پاک فوج نے اترنے پر مجبور کردیا، آج بھی گلگت میں ...
 گن شپ بھارتی ہیلی کاپٹر جسے پاک فوج نے اترنے پر مجبور کردیا، آج بھی گلگت میں موجود

  



گلگت (مانیٹرنگ ڈیسک) پاکستان اور بھارت کے آپسی تعلقات کبھی بھی مثالی نہیں رہے اور بھارت کی طرف سے مختلف نوعیت کے بیان آئے روز سامنے آتے رہتے ہیں جن پر ہنسی کے علاوہ کچھ نہیں کیا جاسکتا، گلگت بلتستان میں ہونیوالے قانون ساز اسمبلی کے انتخابات کے سلسلے میں بھی بھارتی بیان سامنے آیا جس میں گلگت کو متنازع علاقہ قراردیتے ہوئے انتخابات کو غیرقانونی قراردیاگیاجس کا عوام مذاق ہی اڑاتی رہی اور 1971ءسے گلگت میں موجود ہیلی کاپٹر کی یاددلاتی رہی ۔

دنیانیوز کے مطابق بھارتی آرمی یہ ہیلی کاپٹر گلگت کے علاقے جٹیال میں موجود ہے ، 1971ءمیں بھارت نے علاقے میں مسلط ہونے کی ناکام کوشش کی لیکن غیور عوام نے نہایت جواں مردی کامظاہرہ کیا ، پاک فوج کی نادرن انفنٹری بھی بھارت کی حماقت پر نظررکھے ہوئے تھی ، جب بھارتی فوج کایہ گن شپ ہیلی کاپٹر اس علاقے میں آیاتو نادرن انفنٹری کے بھرپور دفاع نے یہیں جٹیال کے علاقے میںہی اترنے پر مجبور کردیا۔ تب سے آج تک بھارت کا گن شپ ہیلی کاپٹر اسی مقام پر موجود ہے ، ایک مرتبہ اترنے کے بعد دوبارہ کبھی پرواز نہیں کرسکا، کسی بھی فوج کے لیے لمحہ ملامت اس سے زیادہ کیا ہوگا کہ ان کا گن شپ ہیلی کاپٹر مال طاقت کے منہ توڑ جواب کیساتھ اتار لیاگیا اور وہیں کئی عشرے بعد بھی واپس نہ لایاجاسکا۔

اس سے یہ ثابت ہوتاہے کہ فوج کے پیچھے جب قوم کھڑی ہوتودشمن اپنے مقاصد میں کبھی کامیاب نہیں ہوسکتا، بھارت آج بھی شاید اپنے گن شپ ہیلی کاپٹر کی موجود گی اور واپس نہ لے سکنے پر افسوس ہی کرتاہوگا۔

مزید : بین الاقوامی /Headlines


loading...