کیا سٹارٹ کرنے کے بعد گاڑی گرم کرنا ضروری ہوتاہے؟ ماہرین نے حقیقت بتادی

کیا سٹارٹ کرنے کے بعد گاڑی گرم کرنا ضروری ہوتاہے؟ ماہرین نے حقیقت بتادی
کیا سٹارٹ کرنے کے بعد گاڑی گرم کرنا ضروری ہوتاہے؟ ماہرین نے حقیقت بتادی

  



نیویارک (نیوز ڈیسک) یہ عام مشاہدے کی بات ہے کہ شدید سردی کے موسم میں کار یا موٹر سائیکل کو چلانے سے پہلے اس کا انجن کچھ دیر کیلئے چلتا چھوڑ دیا جاتا ہے تاکہ یہ مناسب طور پر گرم ہو جائے۔ شدید سرد علاقوں میں اکثر احباب تو گاڑیوں کو چلانے سے پہلے تقریباً نصف گھنٹہ پہلے ان کا انجن سٹارٹ کر دیتے ہیں۔ کیا آپ بھی سمجھتے ہیں کہ یہ عمل ضروری ہے اور اس کا کچھ فائدہ بھی ہے؟ اگر ایسا ہے تو یہ جاننا آپ کیلئے بہت مفید ہو گا کہ یہ عمل مکمل طور پر بے فائدہ ہے اور اس کی قطعاً کوئی ضرورت نہ ہے بلکہ یہ محض آلودگی پھیلانے اور ایندھن کے اخراجات بڑھانے کا ذریعہ ہے۔

جڑواں بچوں کے خواہشمند جوڑوں کے لیے مفید مشورے جاننے کیلئے کلک کریں

 دراصل یہ غلط فہمی پرانے دور کی گاڑیوں کی وجہ سے پھیلی کہ جن میں کاربوریٹر شدید سردی میں انجن میں ہوا اور ایندھن کا مطلوبہ آمیزہ نہیں بنا سکتا تھا اور کم درجہ حرارت کی وجہ سے ان گاڑیوں کے انجن کی کارکردگی نمایاں طور پر متاثر ہو جاتی تھی۔ جدید گاڑیوں میں الیکٹرانک فیول انجکشن کا استعمال کیا جاتا ہے جو درجہ حرات کے مطابق مطلوبہ آمیزہ بناتا ہے اور یہی وجہ ہے کہ گاڑی کو گرم کرنے کی قطعاً کوئی ضرورت نہیں ہوتی۔ آٹو موبیل ماہرین کا کہنا ہے کہ محض 30 سیکنڈ کیلئے انجن کو چلائے رکھنا کافی ہے اور بہتر یہ ہے کہ ایک دفعہ انجن کو سٹارٹ کر کے آف کیا جائے اور پھر دوبارہ سٹارٹ کر لیا جائے۔

مزید : ڈیلی بائیٹس


loading...