مسلم لیگ(ن) ودہولڈنگ کا خمیازہ الیکشن میں بھگتے گی: میاں سلیم

مسلم لیگ(ن) ودہولڈنگ کا خمیازہ الیکشن میں بھگتے گی: میاں سلیم

  

لاہور (فورم رپورٹ :اسد اقبال )تاجر طبقہ ملکی معیشت میں ریڑھ کی ہڈی کی حیثیت رکھتا ہے جو ملک میںآنے والی قدرتی آفات اور سانحات میں حکومت کے ساتھ ہر قسم کاتعاون سمیت ملکی معیشت کے پہیے کو گھمانے سمیت حکمرانوں کے شاہانہ اخراجات مختلف ٹیکسز کی صورتوں میں پورے کر رہا ہے تاہم اس کے باوجود تاجر برادری حکومت کی جانب سے کسی بھی قسم کے ریلیف سے تودور لاہور کی مارکیٹوں کو درپیش مسائل کو بھی حل نہ کر سکی ہے تاجر برادری کی جانب سے احتجاج کے باوجود ودہولڈنگ ٹیکس کو واپس نہ لینا سابق حکومت کی سب سے بڑی غلطی ہے جس کا خمیازہ عام انتخابات میں مسلم لیگ ن کو بھگتنا پڑے گا ۔علاوہ ازیں کالا باغ ڈیم کی تعمیر نہ ہونا اس ملک کے ساتھ ظلم اور عوام کے ساتھ زیادتی کے مترادف ہے ۔ان خیالات کا اظہارمعروف تاجررہنماء اور انجمن تاجران لاہور کے جوائنٹ سیکرٹری میاں سلیم نے "پاکستان "سے خصوصی گفتگوکرتے ہوئے کیا ۔ انہوں نے کہا کہ ملکی معیشت کا 45فیصد ریو نیو تاجر طبقہ ادا کر تا ہے جو اس ملک کی باگ دو ڑ چلا رہا ہے جس نے ملک میں زلزلہ آئے یا سیلاب یا کوئی قدرتی آفت تاجروں نے ہی ہر مشکل گھڑی میں اپنے پاکستانی بھائیوں او ر بہنوں کی بڑھ چڑھ کر خدمت کی اوردکھ کی گھڑی میں برابر کے شریک رہے ۔انہوں نے کہا کہ حکمران طبقہ نے کبھی تاجر برادری کو کوئی ریلیف نہیں دیا بلکہ مختلف ٹیکسز لگا کر خون نچوڑا گیا ۔اس کے باوجو د تاجروں کو چوسمجھا جاتا ہے جبکہ درحقیقت سب سے بڑے چور سیاستدان ہیں جو ٹیکسز ادا نہیں کرتے ۔میاں سلیم نے کہا کہ حکومت تاجروں پر عائد کر دہ ودہولڈنگ ٹیکس واپس لے جس کی مثال دنیا بھر میں نہیں ملتی ۔انہوں نے کہاکہ تاجر برادری متحد ہے اوراشرف بھٹی انجمن تاجران پاکستان کے تاحیات صدر جبکہ میاں طارق فیروز پر لاہور کی تاجر برادری بھرپور اعتماد کا اظہار کرتی ہے ۔ میاں سلیم نے کہا کہ ملک میں غربت، مہنگائی اور بے روزگاری میں مسلسل اضافہ ہو رہا ہے اور کاروباری سر گر میاں مفلو ج الحا ل ہو نے سے مارکیٹو ں میں ہو کا عالم اور تاجر اپنے اخر اجات پورے کرنے سے قاثر ہیں ۔انہوں نے کہا کہ مو جو دہ حکومت کے بلند و بالا دعو ے بھی کھو کھے ثا بت ہو ئے ۔ تاجروں کی امید یں رائیگا ں گئی اور تاجرطبقہ کاروباری ریلیف سے بنی محروم رہا۔میاں سلیم نے کہا کہ کالا باغ ڈیم کی جتنی ضرورت آج ہے اس سے پہلے کبھی نہ تھی اگرآج کالا باغ ڈیم نہ بنا تو آنے والی نسلیں ہمیں کبھی معاف نہیں کر یں گی کیو نکہ پانی کا بحران شدت اختیارکرنے لگا ہے اور بھارت ہمارے پانی پر پہلے ہی قبضہ جمائے پاکستان کو خشک سالی کرنے کی سازش پر کاربند ہے ۔ لہذا ضرورت اس امر کی ہے کہ ملک میں جلد از جلد کالا باغ ڈیم کی تعمیر شروع کی جائے ۔

مزید :

میٹروپولیٹن 4 -