بجلی کی غیر اعلانیہ لوڈشیڈنگ بے لگام، آندھی کے باعث 213فیڈرز سے فراہمی معطل

بجلی کی غیر اعلانیہ لوڈشیڈنگ بے لگام، آندھی کے باعث 213فیڈرز سے فراہمی معطل

  

ملتان،کبیروالا، بٹہ کوٹ، اڈا کوٹ بہادر، عبدالحکیم، ڈیرہ غازی خان، کوٹلہ مغلاں(سٹاف رپورٹر، نمائندگان)ملتان اور گردو نواح میں منگل کی شب شدید آندھی کے باعث بجلی کی ترسیل کا نظام درہم برہم ہو کر رہ گیا ۔ متعدد علاقوں میں اگلے روز 24 گھنٹے بعد بھی بجلی کی فراہمی بحال نہ ہو سکی ۔اعتکاف والے و روزہ دار اذیت میں مبتلا ہو گئے ۔تفصیل کے مطابق منگل کی شب شدید آندھی سے میپکو ریجن میں 213 فیڈرز سے بجلی کی فراہمی معطل ہوئی تھی.بیشتر علاقوں میں اگلے روز بھی بجلی کی فراہمی بحال نہیں ہو سکی تھی۔ لوگوں نے رات مشکلات اور پریشانی میں گزاری ۔ خصوصا اعتکاف بیٹھنے والو ں اورروزہ داروں کو اذیت ہوئی اور بجلی نہ ہونے کے باعث سحری میں مشکل پیش آئی ۔اس کے بعد دن بھر بجلی بند ہونے کے باعث اذیت میں مبتلا رہے ۔ یوپی ایس کچھ دیر بعد ہی جواب دے گئے تھے۔ دیگر افراد تو بجلی کی طویل بندش پر گرمی اور حبس سے تنگ آکر وقت گزارنے اپنے عزیز واقارب کے ہاں چلے گئے لیکن اعتکاف میں بیٹھے مردو خواتین کہاں جاتے‘وہ اپنے گھروں او ر مساجد میں تکلیف میں رہے جن کی گرمی اور حبس سے حالت غیر ہو گئی ۔اس بارے میں میپکو کے ترجمان نے بتایا کہ منگل کی شب شدید آندھی سے میپکو ریجن میں 213 فیڈرز سے بجلی کی فراہمی معطل ہوئی تھی۔میپکو کے افسران و عملہ نے نہایت کم وقت میں متاثرہ سسٹم کی بحالی کا بیشتر کام مکمل کر لیا ہے.اب تک 202 فیڈرز سے بجلی کی فراہمی بحال کی جا چکی ہے۔ بحال ہونیوالے فیڈرز پر انفرادی شکایات کے ازالہ کے لیے میپکو لائن سٹاف متحرک ہے۔ باقی ماندہ متاثرہ فیڈرز سے بجلی کی فراہمی بحال کرنے کیلئے میپکو لائن سٹاف مسلسل کام کر رہا ہے.دریں اثناء ملتان (سٹاف رپورٹر) ملتان سمیت جنوبی پنجاب میں بجلی بحران بدترین ہوگیاہے۔ شیڈول لوڈشیڈنگ میں اضافہ ہونے کے ساتھ ٹرپنگ، بریک ڈاؤن ، کم وولٹیج جیسے مسائل نے صارفین، روزہ داروں کو اذیت میں مبتلا کردیا ہے۔ روزہ داروں کو سخت مشکلات کا سامنا کرنا پڑرہا ہے۔ ملتان شہر میں خرابی اور ٹرپنگ کے باعث بجلی کی بار بار بندش نے صارفین اور روزہ داروں کے ہوش اڑا دئیے ہیں۔منگل اور بدھ کی درمیانی رات شہر کے بیشتر فیڈر 3 سے 5 گھنٹے بند رہے۔ جبکہ شہر کے بیشتر علاقوں میں کم وولٹیج کی وجہ سے برقی آلات بند ہوگئے۔بجلی کے کم وولٹیج کی وجہ سے اے سی، فریج، پانی کی موٹریں ، پنکھے اور لائٹس بند ہوگئیں جس نے شہریوں کی مشکلات میں اضافہ کردیا۔ بدھ کے روز بھی ملتان شہر کو بجلی فراہم کرنے والے فیڈرز پر لوڈشیڈنگ کے ساتھ ساتھ ٹرپنگ بریک ڈاؤن اور کم وولٹیج کے مسائل برقرار رہے۔ سوئی گیس کی لوڈشیڈنگ نے معمولات زندگی درہم برہم کر دئیے ۔کبیروالا ،بٹہ کوٹ،اڈا کوٹ بہادر سے نامہ نگار،نمائندگان کے مطابق گزشتہ درمیانی شب کبیروالا شہر اور نواحی علاقوں میں آنے والی طوفانی آندھی نے تبا ہی مچا کر رکھ دی متعدد علاقوں میں بجلی کے کھمبے گر نے سے بجلی کی ترسیل کا نظام بند ہو گیا جو کہ چوبیس گھنٹے گزرجانے کے باوجود بحال نہ کیا جاسکا ہے آند ھی سے آم کے باغات کو بھی شدید نقصان پہنچا آم کے پکے پھلوں سے بھرے درخت جڑوں سے اکھڑ گئے، جب کہ ہورڈنگ بورڈ ز اوپر گر نے سے نیا بس اسٹینڈ سمیت مختلف علاقوں میں تین افراد زخمی ہو گئے جنہیں مختلف ہسپتالوں میں منتقل کر دیا گیا بجلی کی بندش نے بھی نظام زندگی بری طرح متا ثر ہوا ہے جب کہ شدید گرمی اور بجلی کی بندش نے بھی روزہ داروں تکلیف میں مبتلا کیا ہوا ہے جب کہ چو بیس گھٹوں بجلی کی بندش سے مساجد اور گھروں میں پانی کی شدید قلت کا سامنا کر نا پڑ رہا ہے، بجلی کی بندش کے ستائے روزہ دار میپکو حکام کو کسنے دیتے دکائی دیئے،مقامی حلقوں نے بجلی کی بندش پر شدید احتجاج کرتے ہوئے میپکو حکام سے بجلی کی بلا تعطل فراہمی کا مطالبہ کیا ہے۔عبدالحکیم سے سپیشل رپورٹر کے مطابق عبدالحکیم دین پور۔شہادت کندلہ امیدگڑھ ، جلیل پور ،باگڑ کوٹ اسلام حویلی کورنگہ بربیگی ، قتال پور ،کنڈسرگانہ ،درکھانہ بار، گھگھہ بار میں شدید گردآلود اور تیزرفتار آندھی ،گرد آلود آندھی سے سے ہر طرف مٹی مٹی جمع ہو گئی ،شدید آندھی سے آم کے باغات کو شدید نقصان تاہم شدید آندھی سے کچھ دنوں سے پڑنے والی شدید گرمی میں ا8 کمی ہوگئی اور موسم خوش گوار ہو گیا۔ڈیرہ غازی خان سے سٹی رپورٹر کے مطابق شدید گرمی میں بجلی کی غیر اعلانیہ لوڈشیڈنگ نگران حکومت کیلئے بڑا چیلنج عوام کو بتایا جائے کہ بجلی کی لوڈشیڈنگ میں سابقہ اور نگران حکمران کتنے قصور وار ہیں ملکی سیاست میں بڑھتے انتشار نے بھی عوام کو فکر مند کردیا۔ملک میں پانی کی کمی بھی اللہ تعالیٰ کی ناراضگی ہے ماہ رمضان کے مقدس مہینے میں تاجر برادری ضرورت زندگی کی اشیاء کی فروخت کی قیمتوں میں نمایاں کمی کرکے ثوب حاصل کرے ۔ان خیالات کا اظہارصرافہ مارکیٹ ایسوسی ایشن کیجنرل سیکرٹری محمدر صفدر خٹک نے صحافیوں سے گفتگو کرتے ہوئے کیا۔کوٹلہ مغلاں سے نمائندہ پاکستان کے مطابق کو ٹلہ مغلاں کی نواحی بستیوں موضع رستم لغاری ،سلیم آباد،ہیرو،بستی سکھانی ،بولے والہ سمیت دیگرعلاقوں میں لوڈ شیڈنگ شہریو ں کے لئے عذاب غضب کی گر می میں واپڈا ملازمین کی نا اہلی کے باعث مکینیوں کا جینا محال مبینہ برف کار خانہ ما لکان کے ساتھ گٹھ جوڑ کرکے چمک کے عوض مین لائنوں سے جمپر اتار دیئے جاتے ہیں ۔بجلی نہ ہو نے سے کاروبار زندگی معطل ہونے سے بے روز گاری کا راج ملازمین کی دیہی علاقوں میں ڈیو ٹی سے چاندی ہو گئی فوری طورپر چیف میپکو آفیسر ملتان و ایکسئن راجن پور سے جبر ی نا جائز لو ڈ شیڈنگ و ملازمین کی من مانیوں کا نوٹس لے کر ذمہ داروں کے خلاف کاروائی کا مطالبہ ۔ تفصیلات کے مطابق کو ٹلہ مغلان کی نواحی بستیوں میں لو ڈشیڈنگ کا دورانیہ 18 گھنٹے تک جا پہنچا شہر یو ں محمد امتیاز،سرفراز احمد،مشتاق احمد،شفیق خان،جج بھائی،و دیگر نے صحافیو ں سے گفتگو کر تے ہوئے کہا کہ سب ڈویژن جام پور گلشن آبادکو ٹلہ مغلان کے ملازمین ایل ایس اور لائن مینو ں و دیگر اہلکاروں نے مبینہ چمک کے عوض جان بوجھ کر لوڈ شیڈنگ کو معمول بنایا ہوا ہے دیہی علاقوں کی بجلیاں برف کار خانہ ما لکان سے مبینہ گٹھ جو ڑ کر کے مین تاروں سے دس دس گھنٹے جمپر اتار دیتے ہیں لو ڈ شیڈنگ کا بہا نہ بنا کر بجلی کو نا یاب کیا ہوا ہے کرپٹ ملازمین کی ہٹ دھر می و لالچ کی سزااہل علاقہ بھگت رہے ہیں بجلی نہ ہونے سے کا ر و بار مانند پڑ گئے ہیں اوپر سے گر می نے جینا محال کر رکھا ہے بجلی تواتر نہ ہونے سے دکا ندار دن بھر مکھیاں مار مار کر خالی گھروں کو لو ٹ جاتے ہیں ہم چیف میپکو آفیسر ملتان و ایکسئن راجن پور سے فی الفور نو ٹس لے کر ذمہ داروں کے خلاف کا ر وائی کا مطالبہ ۔

مزید :

ملتان صفحہ آخر -