پنجاب میں انتخابات حسن عسکری کی زیر نگرانی ہی ہونگے :نگران وزیر قانون

پنجاب میں انتخابات حسن عسکری کی زیر نگرانی ہی ہونگے :نگران وزیر قانون
پنجاب میں انتخابات حسن عسکری کی زیر نگرانی ہی ہونگے :نگران وزیر قانون

  

اسلام آباد (ڈیلی پاکستان آن لائن)نگران وزیر قانون بیر سٹر علی ظفر نے کہا ہے کہ پنجاب میں عام انتخابات حسن عسکری کے زیر نگرانی ہی ہونگے ۔ ان کے تجزیے اور تبصرے ان کو اس منصب کیلئے نا اہل نہیں کرتے ۔

جیو نیوز کے پروگرام ”کیپٹل ٹاک “ میں گفتگو کرتے ہوئے نگران وزیر قانون نے کہا ہے کہ حسن عسکری کا نام حکومت ، اپوزیشن اور پارلیمانی کمیٹی کی ناکامی کے بعد الیکشن کمیشن کی جانب سے تجویز کیا گیا ہے اور اب آئین کے مطابق اس کو واپس نہیں لیا جا سکتا ۔انہوں نے کہا کہ تجزیئے ان کا نقطہ نظر ہے ۔ اگر انہوں نے مسلم لیگ ن کے بارے میں کچھ تجزیے دیئے بھی ہیں تو وہ آئینی طور پرنا اہل نہیں ہوتے ۔ ان کوالیکشن کمیشن نے آئینی طور پر نامزدکیاہے اور پنجاب میں انتخابات ان کے زیر نگرانی ہی ہونگے ۔انہوں نے کہا کہ پانی اس وقت ہمار ے ملک کا بڑ ا مسئلہ ہے جس کو حکومتوں نے سیاسی مقاصد کی وجہ سے اپنی حکمت عملی کا حصہ نہیں بنایا لیکن اب وقت آگیا ہے کہ سپریم کورٹ اس مسئلے کو آگے لیکر چلے ۔انہوں نے کہا کہ انڈیا اپنے ڈیم بنا کر بیٹھا ہوا ہے جس کو دیکھنا ہوگا ۔ چائنہ بھی ڈیم بنانے کی طرف جا رہا ہے جبکہ آب و ہوا میں تبدیلی کی وجہ سے برف باری بھی 30فیصد کم ہوئی ہے جس کی وجہ سے یہ مسئلہ سنگین ہو جائے گا ۔انہوں نے کہا کہ انتخابات میں حصہ لینے والے سیاسی رہنماﺅں کو فول پروف سکیورٹی فراہم کی جائیگی ۔نگران حکومت کی ذمہ داری یہی ہوگی کہ ایک پرامن ماحو ل میں شفاف اور غیر جانبدارانہ انتخابات کروائے۔

مزید :

قومی -