رقم منتقلی،بیرون ملک سفر،گاڑیوں کی خریداری کو واچ کر کے ٹیکس نوٹسز بھجوانے کا فیصلہ

  رقم منتقلی،بیرون ملک سفر،گاڑیوں کی خریداری کو واچ کر کے ٹیکس نوٹسز بھجوانے ...

  

اسلام آباد (آن لائن)فیڈرل بورڈ آف ریونیو نے آئندہ مالی سال 2020-21 کے وفاقی بجٹ میں نان فائلرزکے خلاف کارروائی کے حوالے سے حکمت عملی تیار کر لی ہے۔ ایف بی آر ذرائع کے مطابق نان فائلرز،بے نامی دار، ٹیکس چوروں اور بڑی ٹرانزایکشنز کی چھان بین کا بھی فیصلہ کیا گیا ہے جبکہ ایسے افراد جو بیرون ملک سفر کریں گے اور نئی گاڑیاں خریدیں ہوں گی ان کو بھی خود کار نظام کے تحت نوٹسز جاری ہوں گے اس کے ساتھ ساتھ فیلڈ فار میشنز سے حاصل آئی ٹی ڈیٹا کی مدد سے جانچ پڑتال بھی کی جائے گی۔خود کار نظام کے ذریعے نوٹسز جاری ہونے کے بعد ایسے افراد کو جرمانے بھی ہوں گے جو کہ ٹیکس نظام سے باہر ہیں۔ نان فائلرز بھی ہیں اور بھاری خریداریاں کررہے ہیں۔ذرائع کا کہنا ہے کہ یہ تمام تر اقدامات اس لئے اٹھانے کا فیصلہ کیا گیا کہ تا کہ ایف بی آر اپنے ریونیو کے ہدف کو حاصل کر سکے،ذرائع نے بتایا کہ ایف بی آر ہیڈ کوارٹرز میں ٹیکس انفارمیشن پراسیسنگ یونٹ بھی قائم کر دیا گیا ہے اور ڈیٹا کی چھان بین کے لئے ایف بی آر میں آئی ٹی ماہرین کو بھی تعینات کیا جائیگا۔

ٹیکس نوٹسز

مزید :

صفحہ آخر -