تاجروں کا حکومت سے بندکاروبار ایس او پیز کیساتھ کھولنے کا مطالبہ

  تاجروں کا حکومت سے بندکاروبار ایس او پیز کیساتھ کھولنے کا مطالبہ

  

اسلام آباد (این این آئی)مر کزی تنظیم تا جر ان پاکستان کے صدر محمد کاشف چودھری نے کہا ہے کہ حکومت ریسٹورنٹ،مارکی و دیگر بند کاروباروں کو ایس او پیز کے ساتھ کھولنے کا فیصلہ کرے۔ مر کزی تنظیم تا جر ان پاکستان کے صدر محمد کاشف چودھری ملک بھر کے تا جر رہنماؤں کے ہمراہ اسلام آباد میں پر یس کانفر نس کرتے ہوئے کہاکہ تاجروں نے شوق سے کاروبار نہیں کھولے بلکہ معاشی حالات سے مجبور ہو کر جانیں داؤ پر لگا کر کاروبار کھولے۔ حکومت نے معاشی صورتحال،قومی پیداوار میں کمی،بے روزگاری اور ٹیکس کولیکشن کے دباؤ کا شکار ہو کر کاروبار کھولا۔حکو مت نے لاک ڈاؤن کرنا ہے تو تاجروں کو ماہانہ اخراجات دے کر بیشک کرفیو کا نفاذ کرے۔حکومت نے تاجروں کیلئے ریلیف پیکیج کا اعلان نہ کیا تو کاروبار بند اور لاکھوں لوگ بیروزگار ہو ں گے۔ حکومت نے زبانی جمع خرچ اور جھوٹے وعدوں کے سوا عملا کچھ نہیں کیا۔کور ونا کے دوران پیش کیے جا نے والے بجٹ میں خرید و فروخت پر شناختی کارڈ کی بے مقصد شرط کو ختم کیا جا ئے۔ تعمیراتی شعبے کی طرح تمام کاروباروں میں غیر دستاویزی سرمایہ کاری کیلئے خصوصی مراعات کا اعلان کیا جائے۔سیلز ٹیکس کو 17% فیصد سے 9 فیصدپر لایا جائے۔ آٹے،چینی و اشیائے خوردونوش کی قیمتوں میں کمی کیلئے ان پر سیلز ٹیکس کا خاتمہ کیا جائے۔انکم ٹیکس و دیگر تمام ٹیکسز کی شرح کو کم ازکم پچاس فیصد کم کیا جائے۔ کاٹیج انڈسٹری کو خصوصی حیثیت و مراعات،آڑھتیوں،جیولرز،موبائل کے مسائل حل کیے جائیں۔ شرح سود کو مزید کم کر کے 4% اور پٹرولیم مصنوعات و بجلی کی قیمتوں کو مزید کم کیا جائے۔ایکسپورٹ میں اضافے کیلئے زیرو ریٹڈ سیکٹر کو بحال کیا جائے۔

کاشف چودھری

مزید :

صفحہ آخر -