کراچی کی آبادی بڑھ رہی ہے لیکن پانی کی قلت برقرار ہے، فردوس شمیم نقوی

کراچی کی آبادی بڑھ رہی ہے لیکن پانی کی قلت برقرار ہے، فردوس شمیم نقوی
کراچی کی آبادی بڑھ رہی ہے لیکن پانی کی قلت برقرار ہے، فردوس شمیم نقوی

  

کراچی (ڈیلی پاکستان آن لائن)سندھ اسمبلی میں قائد حزب اختلاف فردوس شمیم نقوی کاکہنا ہے کہ کراچی کی آبادی بڑھ رہی ہے لیکن پانی کی قلت برقرار ہے۔

کراچی میں پریس کانفرنس کرتے ہوئے فردوس شمیم نقوی نے کہا کہ 10سال میں کراچی کی آبادی دگنی ہوجائے گی لیکن پانی پر کوئی توجہ نہیں دی جارہی ہے۔انہوں نے کہا کہ کراچی کو ایک ہزار میلن گیلن یومیہ پانی کی ضرورت ہے۔

انہوں نے کہا کہ کراچی کے لوگ سو سے ڈیڑھ سو میلن گیلن پانی بورنگ سے حاصل کرتے ہیں، کراچی میں تین سو ملین گیلن پانی کافقدان ہے۔فردوس شمیم نقوی نے کہا کہ منصوبے کا 13بار راستہ تبدیل کیا گیا جس کی وجہ سے تخمینہ بڑھا اور تاخیر ہوئی۔انہوں نے کہا کہ اپنے من پسند افراد کو نوازنے کے لیے 13 بار منصوبے کا راستہ تبدیل کیا گیا۔

فردوس شمیم نقوی نے حکومت سندھ پر تنقید کرتے ہوئے کہا کہ میں وزیراعظم عمران خان سے بار بار کہتا ہوں کہ سندھ کی حکومت نا اہل ہے۔ انہوں نے کہا کہ وزیر اعظم کو کراچی کے عوام نے ووٹ دیا، کراچی کے عوام کو کب تک یہ ظلم برداشت کرنا ہو گا۔فردوس شمیم نقوی نے کہا کہ شہر میں کچرے کے انبار ہیں سڑکیں ٹوٹی پھوٹی اور سیوریج تباہ ہے۔ان کا مزید کہنا تھا کہ کے فور منصوبہ سندھ حکومت کے پاس رہا تو اس سے دو سال تک پانی نہیں ملے گا۔

مزید :

قومی -علاقائی -سندھ -کراچی -