مہنگائی میں کئی گنا اضافہ، حکومت کی معاشی ٹیم کہاں گئی، ا فتخار احمد خان

      مہنگائی میں کئی گنا اضافہ، حکومت کی معاشی ٹیم کہاں گئی، ا فتخار احمد ...

  

شاہجمال (نمائندہ پاکستان) مہنگائی میں دن بدن اضافہ بے روزگاری تاریخ کی بلند ترین سطح پر اور حکمرانوں کا دعوی کہ معیشت ترقی کر رہی ہے مگر اشیائے خوردو نوش کئی گنا مہنگی چھوٹا ملازم اور دیہاڑی دار طبقہ زندہ درگور ہو چکا ہے۔ان خیالات کا اظہار سیکرٹری اطلاعات (بقیہ نمبر4صفحہ6پر)

پیپلز پارٹی جنوبی پنجاب و ایم این اے حلقہ این اے 184نوابزادہ افتخار احمد نے پریس کانفرنس میں کیا انہوں نے سرکاری ادارہ شماریات کی رپورٹ صحافیوں کے حوالے کرتے ہوئے بتایا کہ تین سالوں میں مہنگائی میں ہوشربا اضافہ ہو چکا ہے اگست 2018 سے جون 2021تک صرف اشیائے خوردونوش کی قیمتوں میں چالیس فیصد سے زائد اضافہ ہو چکا ہے بیس کلو آٹے کا تھیلا 373روہے سے زائد،بکرے کا گوشت 304روپے فی کلو سے زائد،گھی کی قیمتیں سو فیصد سے بھی  زائد،دال ماش 111روہے فی کلو سے زائد،دال مونگ 110روپے فی کلو سے زائد،چینی اوسطا 56روپے فی کلو،انڈے 52روپے درجن،دال مسور 46روپے فی کلو،تازہ دودھ 24روپے لٹر،لہسن 44روپے،دال چنا 34روپے،چاول 27روپے،مرغی زندہ 155روپے کلو،دہی 25روپے فی کلو،گڑ پچاس روپے فی کلو،مہنگی ہوئی یہ رپورٹ سرکاری ادارہ شماریات کی تیار کردہ ہے مگر حقیقت یہ ہے اس وقت بھی یہ تمام چیزیں تین سال قبل سے کئی گنا مہنگی مارکیٹ میں فروخت کی جارہی ہیں اس طرح ادویات کی قیمتوں میں ساڑھے سات سو فیصد تک اضافہ کیا جا چکا جو ہنوز جاری ہے یہ اعزاز بھی سیلیکٹڈ کو حاصل ہے کہ ملکی تاریخ میں پہلی مرتبہ 2020میں گندم 1400روپے من خرید کر آٹا 2800روپے من فروخت کیا گیا اب پی ٹی آئی حکومت مزید بھاری ٹیکس لگا کر دیہاڑی دار اور معمولی تنخواہ کے حامل لوگوں پر معاشی دبا ڈالنا چاہتی ہے حکومت کی مکمل ناکامی ملاحظہ کریں کہ چوتھا بجٹ پیش کرنے سے قبل تک تین وزرائے خزانہ اور پانچ سیکرٹری خزانہ تبدیل کر چکی ہے مگر وہ بہترین معاشی ٹیم کہیں گم ہو کر رہ گئی ہے جس کے اعلانات کنٹینر سے ہوتے رہے اب آئی ایم ایف کے ملازمین سے بجٹ تیار کرا کے چھوٹے ملازمین اور عوام کو زندہ درگور کرنے کی موجودہ بجٹ میں کوشش کی جائیگی جسے ناکام بنانے کے لئیے پیپلز پارٹی اپنا لائحہ عمل ترتیب دے چکی ہے پاکستان پیپلز پارٹی بلاول بھٹو کی قیادت میں غریب عوام کے مفادات کی بھر پور نگہبانی کرتے ہوئے مختلف ٹیکسسز کی مد میں  مہنگائی کا مزید بوجھ عوام پر لادنے سے حکمرانوں کو روکے گی۔

افتخار احمد خان

مزید :

ملتان صفحہ آخر -