ریونیو ریکارڈ کے حقائق بیان کرنیوالے پٹواری پر وکلاء کا تشدد

ریونیو ریکارڈ کے حقائق بیان کرنیوالے پٹواری پر وکلاء کا تشدد

لاہور(اپنے نمائندے سے)بورڈ آف ریونیو کے ممبر جوڈیشل 1کی عدالت میں ریونیو ریکارڈ پیش کرنے اور ریکارڈ کے حقائق بیان کرنے والے پٹواری پر وکلاء کا تشدد،اٹھاکر بار روم لے گئے ،2گھنٹے تک حبس بے جا میں رکھنے کے بعد چھوڑ دیا ،ممبر جوڈیشل 1نے انکوائری کا حکم دے دیا ،روزنامہ پاکستان کوملنے والی معلومات کے مطابق گزشتہ روز بورڈ آف ریونیو کے ممبر جوڈیشل 1سید حسن رضا جعفری کی عدالت میں تحصیل ننکانہ صاحب کے موضع مچھرالہ کا پٹواری شاہد محمود ریکارڈ سمیت پیش ہوا اور جوڈیشل ممبر کے احکامات پر ریونیو ریکارڈ کے حوالے سے عدالت کو آگاہی دی ،بیانات ریکارڈ کروانے کے بعد مذکورہ پٹواری کمرہ عدالت سے باہر نکلا تو نواز شاہ نامی ایڈوکیٹ سمیت دیگر وکلاء کی بڑی تعداد مذکورہ پٹواری کواٹھا کر بار روم میں لے گئی اور پٹواری شاہد محمود پر شدید تشدد اور ذودکوب کیا ،2گھنٹے بعد اپنی جان بچا کر بھاگنے میں کامیاب ہونے والا پٹواری حالت غیر ہونے کے باوجود ممبر جوڈیشل 1سید حسن رضا جعفری کے سامنے پیش ہو گیا،ممبر جوڈیشل 1نے اس وقوعہ کی فوری انکوائری کا حکم دے دیاجبکہ پٹواری کو طبعی امداد کیلئے مقامی ہسپتال روانہ کر دیا گیا۔

وکلاء کا تشدد

مزید : صفحہ آخر