پاکستان ورلڈکپ2015ء میں سب سے کم ہدف کا دفاع کرنے والی پہلی ٹیم بن گئی

پاکستان ورلڈکپ2015ء میں سب سے کم ہدف کا دفاع کرنے والی پہلی ٹیم بن گئی
پاکستان ورلڈکپ2015ء میں سب سے کم ہدف کا دفاع کرنے والی پہلی ٹیم بن گئی

  


آکلینڈ (مانیٹرنگ ڈیسک) قومی کرکٹ ٹیم نے جنوبی افریقہ کے خلاف شاندار فتح حاصل کر کے نا صرف کوارٹر فائنل میں رسائی کے امکانات انتہائی روشن کر لئے ہیں بلکہ ورلڈکپ 2015ءمیں ایک اور اعزاز بھی اپنے نام کر لیا ہے۔ تفصیلات کے مطابق پاکستان نے جنوبی افریقہ کے خلاف پہلے بیٹنگ کرتے ہوئے 222 رنز بنائے اور ڈک ورتھ لوئس میتھڈ کے تحت یہ ہدف 232 کر دیا گیا اور جنوبی افریقہ کو اسے حاصل کرنے کیلئے 47 اوورز دیئے گئے۔ جنوبی افریقہ کے بلے باز پاکستانی باﺅلرز کی طوفانی باﺅلنگ کا سامنا نہ کر سکے اور پاکستان یہ میچ 29 رنز سے جیت گیا جس کے بعد پاکستان اب تک ورلڈکپ میں سب سے کم ہدف کا دفاع کرنے والی پہلی ٹیم بن گئی ہے۔

واضح رہے کہ ورلڈکپ کا پہلا میچ کھیلنے والے سرفراز احمد نے شاندار بلے بازی کرتے ہوئے 49 گیندوں پر 49 رنز بنا کر ٹیم کو ناصرف اچھا آغاز فراہم کیا بلکہ وکٹ کے پیچھے شاندار کیچز پکڑ کر قومی ٹیم کی جیت میں اہم کردار ادا کیا۔ کپتان مصباح الحق نے بھی شاندار اننگز کھیلنے کی روایت برقرار رکھی۔

واضح رہے کہ ورلڈکپ 2015ءمیں آسٹریلیا کی جانب سے سب سے زیادہ 417 رنز کا مجموعہ جوڑا جبکہ جنوبی افریقہ بھی اس ورلڈکپ میں 400 سے زائد رنز کا ہدف دے چکا ہے تاہم پاکستان کرکٹ ٹیم کی ابتدائی دو میچوں میں ناقص کارکردگی کے بعد کسی بھی ٹیم کو یہ امید نہ تھی کہ وہ جنوبی افریقہ جیسی ٹیم کے خلاف محض 232 رنز بنا کر ہی میچ جیت جائے گی۔ شائقین کرکٹ کے مطابق پاکستان نے یہ میچ جیت کر ناصرف خود کو دنیا کی بہترین ٹیم ثابت کیا ہے بلکہ ٹورنامنٹ میں موجود باقی ٹیموں کیلئے بھی خطرے کی گھنٹی بجا دی ہے اور تمام ٹیمیں اب اس خوف میں مبتلا ہو گئی ہیں کہ پاکستان ٹیم نے یہ پرفارمنس برقرار رکھی تو اس کے خلاف فتح حاصل کرنا انتہائی مشکل ہو گا۔

مزید : Cricket World Cup 2015


loading...