کاروبار تو ہوتا رہے گا لیکن پاکستان کا میچ دوبارہ نہیں آئے گا:پاکستانی شائقین

کاروبار تو ہوتا رہے گا لیکن پاکستان کا میچ دوبارہ نہیں آئے گا:پاکستانی شائقین
کاروبار تو ہوتا رہے گا لیکن پاکستان کا میچ دوبارہ نہیں آئے گا:پاکستانی شائقین

  


آکلینڈ(افضل افتخار سے)پاکستانی دنیا میں کہیں بھی چلے جائیں ، ان کا دل ہمیشہ پاکستان میں ہی لگا رہتا ہے اور اگر بیرون ملک پاکستان کا میچ ہو تو پھرہر پاکستانی کی کوشش ہوتی ہے کہ وہ یہ میچ ضرور دیکھے کیونکہ پر دیس میں بیٹھے پاکستانیوں کو ’گوروں کے گراﺅنڈ‘میں اپنی ٹیم کو کھیلتا دیکھ کر وہ سکون ملتا ہے جو شاید کبھی بھی بیان نہیں کیا جاسکتا۔

روزنامہ پاکستان سے بات کرتے ہوئے پاکستانی شائقین نے کہا کہ وہ جہاں بھی ہوں ان کا دل پاکستان میں ہوتا ہے اور آج پاکستان کی شاندار فتح پر ان کا سر فخر سے بلند ہوگیا ہے۔ ان کا کہنا تھا کہ آج کی جیت سے ہمیں سبق ملتا ہے کہ کبھی بھی دل چھوٹا نہیں کرنا چاہیے اور محنت کر کے اللہ تعالیٰ پر بھروسہ کرنا چاہیے۔

ایک پاکستانی سپورٹر ’تانیہ ‘جو آسٹریلیا کے شہر پرتھ سے ایک لمبا سفر طے کر کے آکلینڈ آئی تھی نے کہا کہ پاکستان کو فاتح دیکھ کر اس کی ساری تھکان اتر گئی ہے اور جو لمبا سفر اس نے طے کیا تھا ،اب اسے اس کا ذرا بھی کدھ نہیں اوراس کے پیسے پورے ہوگئے ہیں۔اس کا کہنا تھا کہ اب وہ پاکستان کا اگلا میچ بھی ضرور سٹیڈیم میں جاکر دیکھے گی۔

ایک اور سپورٹر فیصل محمود کا کہنا تھا کہ وہ آکلینڈ میں رہتا ہے اور اس نے اس میچ کی ٹکٹ ورلڈ کپ سے پہلے ہی بک کردی تھی لیکن ورلڈ کپ میں پاکستان کی ناقص کار کردگی دیکھ کر وہ مایوس نہیں ہوا۔اس کا کہنا تھا کہ اسے یقین تھا کہ پاکستان یہ میچ جیت جائے گااور ایسا ہی ہوا۔ایک پاکستانی بزنس مین شہباز شبیر جو سڈنی سے آکلینڈ آیا تھا کا کہنا تھا کہ وہ اپنا کاروبار چھوڑ کر صرف اپنی ٹیم کی سپورٹ کے لئے آیا ہے۔’کاروبار تو ہوتا رہے گا لیکن پاکستان کا میچ دوبارہ نہیں آئے گا‘،شہباز شبیر نے مزیدکہا کہ آج کی جیت سے پاکستان کے کوارٹر فائنل میں پہنچنے کے امکانا ت روشن ہوگئے ہیں اور اب وہ آسٹریلیا میں پاکستان کو فائنل میں کھیلتے ہوئے دیکھنا چاہتا ہے۔۔۔انشاء اللہ

مزید : Cricket World Cup 2015


loading...