ورلڈٹی 20فارمیٹ تیار: سپراوور ختم ، خراب موسم پر فائنل کھیلنے والی دونوں ٹیمیں فاتح ہوں گی

ورلڈٹی 20فارمیٹ تیار: سپراوور ختم ، خراب موسم پر فائنل کھیلنے والی دونوں ...

 کولکتہ(آن لائن) ورلڈ ٹوئنٹی 20 کے لیگ میچز میں کوئی سپر اوور نہیں ہوگا، فائنل سمیت کسی مقابلے کا ریزرو ڈے بھی نہیں رکھا گیا، گروپ اسٹیج پر ٹائی کی صورت میں زیادہ فتوحات، پوائنٹس، رن ریٹ، باہمی فتوحات، سیڈنگ پر اگلے راؤنڈ میں جگہ بنانے والی ٹیم کا فیصلہ ہوگا، پاکستان ٹیم 3 سیڈ ہے، فائنل میں موسم کی مداخلت ہوئی تو دونوں فائنلسٹ مشترکہ فاتح بن جائیں گی۔بھارت میں شیڈول ایونٹ کے کوالیفائنگ راؤنڈ کا آغاز بدھ سے ہورہا ہے۔ تفصیلات کے مطابق ورلڈ ٹوئنٹی 20 میں مجموعی طور پر 16 ٹیمیں شریک ہیں، ان میں سے 8 کے درمیان کوالیفائنگ راؤنڈ بدھ سے شروع ہوگا، اس میں بنگلہ دیش، نیدرلینڈز، آئرلینڈ اور اومان گروپ اے جبکہ زمبابوے، اسکاٹ لینڈ، ہانگ کانگ اور افغانستان بی میں شامل ہیں، ہر گروپ کی چاروں ٹیموں کو سیڈنگ دی گئی ہے۔ اس راؤنڈ میں ٹاپ پر رہنے والی اے کی ٹیم دوسرے راؤنڈ میں گروپ 2 کو جوائن کرے گی،بی کی ٹاپ ٹیم گروپ 1 میں شامل ہوگی۔دوسرے راؤنڈ کے گروپ ون میں سری لنکا ٹاپ سیڈ، جنوبی افریقہ 5 سیڈ، انگلینڈ 8 سیڈ اورکوالیفائر بی ون 9 سیڈ ہوگی۔ اسی طرح گروپ 2 میں موجود بھارت سیکنڈ، پاکستان تھرڈ، آسٹریلیا 6، نیوزی لینڈ 7 اور کوالیفائر اے ون 10 سیڈ قرار دیے گئے ہیں۔ پہلے اور دوسرے راؤنڈ میں اگلے مرحلے کیلئے رسائی حاصل کرنے والی ٹیموں کا فیصلہ زیادہ فتوحات اور پوائنٹس کی بنیاد پر ہوگا، اگر اس میں2 ٹیمیں یکساں رہیں تو پھر فیصلہ رن ریٹ پر ہوگا، یہ بھی یکساں ہوا تو باہمی مقابلے کا فاتح اگلے راؤنڈ میں جائے گا، اگر کسی گروپ کے تمام میچز بے نتیجہ رہے تو پھر اگلے راؤنڈ میں بہتر سیڈنگ کی حامل ٹیم جائے گی۔ ان راؤنڈز میں سپر اوور نہیں ہوگا تاہم سیمی فائنل میں مقابلہ برابر ہونے پر اس کا استعمال ہوگا۔اگر موسم کی وجہ سے میچ ہوتا ہی نہیں یا پھر سپر اوور کا انعقاد نہیں ہو پاتا تو گذشتہ راؤنڈ میں جس ٹیم نے ٹاپ پر اختتام کیا وہی آگے جائے گی، فائنل میں بھی ٹائی ہونے پر سپر اوور کا انعقاد نہ ہوپانا یا پھر میچ کے موسم یا کسی دوسری وجہ سے منعقد نہ ہونے پر دونوں ٹیموں کو مشترکہ فاتح قرار دیا جائے گا۔

مزید : کھیل اور کھلاڑی