یمن میں عمر رسیدہ افرادکے مراکز پر حملہ شیطانی عمل ہے،پوپ فرانسس

یمن میں عمر رسیدہ افرادکے مراکز پر حملہ شیطانی عمل ہے،پوپ فرانسس

ویٹی کن(این این آئی)کیتھولک عیسائیوں کے روحانی پیشوا پوپ فرانسس نے یمن میں چار راہباؤں سمیت 16 افراد کے قتل کی مذمت کی ہے۔ عدن شہر میں ایک عمر رسیدہ افراد کے مرکز پر ہونے والے حملے کو انھوں نے ’بدحواس قدم اور شیطانی تشدد‘ قرار دیا۔میڈیارپورٹس کے مطابق ویٹیکن کی جانب سے جاری کردہ پیغام میں کہا گیا ہے کہ ہلاک ہونے والی دو راہباؤں کا تعلق روانڈا اور دیگر دو کا بھارت اور کینیا سے تھا۔ وہ بطور نرس اس مرکز میں کام کر رہی تھیں اور جب یہ حملہ ہوا اس وقت یہاں رہائش پذیر80 افراد کو کھانا دے رہی تھیں۔ویٹیکن کے سیکریٹری سٹیٹ پیٹرو پارولن کا کہنا تھا کہ پوپ فرانسس ’یہ بے معنی قتل عام ہمارے ضمیر کو جگائے گا، دلوں کو تبدیل کرے گا، اور تمام فریقین کو ہتھیار پھینک کر مکالمے کے راستے پر لے آئے گا۔

مزید : عالمی منظر