فلسطینی اسیر یزن حنانی کی مسلسل 18 ویں دن بھوک ہڑتال

فلسطینی اسیر یزن حنانی کی مسلسل 18 ویں دن بھوک ہڑتال

نابلس(آن لائن)فلسطینی اسیر یزن حنانی کے خاندان نے کہا ہے کہ حنانی پچھلے 18 دنوں سے مسلسل بھوک ہڑتال کررہے ہیں اور قابض صیہونی حکام ہی ان کی زندگی کے ذمہ دار ہیں۔اسیر کے بھائی حنفی حنانی نے بتایا ہے کہ ان کے بھائی نے اپنی انتظامی حراست کے خلاف احتجاج کے طور پر بھوک ہڑتال شروع کررکھی ہے۔

اسرائیل کے کالے قانون کے مطابق انتظامی حراست کے تحت کسی بھی قیدی کو بغیر کسی مقدمے یا سماعت کے چھ ماہ تک جیل میں رکھا جاسکتا ہے۔

حنانی نے خبررساں ایجنسی قدس پریس کو بتایا ہے کہ نقب جیل کی انتظامیہ نے ان کے بھائی کو خبردار کیا ہے کہ وہ پیر تک اپنی بھوک ہڑتال کو ختم کردیں۔ اگر انہوں نے ایسا نہیں کیا تو انہیں قید تنہائی میں ڈال دیا جآئے گا۔ان کا کہنا تھا کہ ان کے بھائی نے اپنی انتظامی حراست کے خاتمے تک بھوک ہڑتال ختم کرنے سے انکار کردیا ہے۔ انہوں نے مزید بتایا کہ ان کے 22 سالہ بھائی کو پچھلے سال کے دوران 28 اکتوبر کو نابلس کے علاقے بیت فوریک سے اغوا کیا گیا تھا۔

مزید : عالمی منظر