محکمہ ایکسائز متعدد نیم سرکاری اداروں سے پراپرٹی ٹیکس کی وصولی میں ناکام ہو گیا

محکمہ ایکسائز متعدد نیم سرکاری اداروں سے پراپرٹی ٹیکس کی وصولی میں ناکام ہو ...

لاہور(شہباز اکمل جندران)ایکسائز اینڈٹیکسیشن ڈیپارٹمنٹ صوبے بھر میں نیم سرکاری اداروں سے پراپرٹی ٹیکس کی وصولی میں ناکام ہوگیا۔واپڈا ، پی ٹی سی ایل ، ترقیاتی اداروں ،آرٹس کونسلوں، مارکیٹ کمیٹیوں اور بینکنگ کمپنیوں و دیگر سے اڑھائی کروڑ روپے سے زائد واجبا ت وصول نہ کئے جاسکے۔ معلوم ہواہے کہ پراپرٹی ٹیکس ایکٹ 1958کے سیکشن 3اور اس کی ذیلی دفعات کے ساتھ ساتھ سیکرٹری ایکسائزاینڈٹیکسیشن کی طرف سے 3اگست2011کو جاری ہونے والے نوٹیفکیشن نمبر SO TAX(E&T)3-90/2008(P-111)کے تحت واپڈا اور دیگر نیم سرکاری اداروں کو پراپرٹی ٹیکس کی ادائیگی سے استثنیٰ حاصل نہیں ہے۔لیکن اس کے باوجود صوبے بھر میں ایسے اداروں سے معمول میں پراپرٹی ٹیکس وصول نہ کرنا پریکٹس کا حصہ بن چکا ہے۔بتایا گیا ہے کہ صوبے بھر میں واپڈا ، پی ٹی سی ایل ، ترقیاتی اداروں ،آرٹس کونسلوں، مارکیٹ کمیٹیوں اور بینکنگ کمپنیوں و دیگرنیم سرکاری اداروں کے مرکزی ، ریجنل اور ڈویژنل اور ضلعی دفاتر پراپرٹی ٹیکس کی مد میں ا ڑھائی کروڑ روپے سے زائد کے نادہندہ ہیں۔محکمے کے اہلکار سروے کے دوران ان اداروں کی تشخیص تو کرتے ہیں۔ لیکن انہیں ڈیمانڈ نوٹس ارسال نہیں کرتے ۔معمول میں ایکسائز اینڈٹیکسیشن کو پراپرٹی ٹیکس کے جن زونز اور علاقوں میں نیم سرکاری اداروں کے دفاتر سے پراپرٹی ٹیکس کی وصولی میں ناکامی کا سامنا ہے۔ ان میں راجن پور میں نیم سرکاری اداروں کے ذمے 94ہزار روپے واجب الادا ہیں۔ اسی طرح چنیوٹ میں ایک لاکھ 22ہزار ، ننکانہ میں 50ہزار ، نارووال میں سوا لاکھ روپے، جھنگ میں 50ہزار روپے، وہاڑی میں ایک لاکھ روپے، پراپرٹی ٹیکس زون 9لاہور میں ساڑھے تین لاکھ روپے، سرگودھا میں تین لاکھ روپے، پراپرٹی ٹیکس زون 5لاہور میں 2لاکھ روپے، پراپرٹی ٹیکس زون 7لاہور میں 50ہزار ، زون ٹو میں 5لاکھ روپے، زون 6میں دو لاکھ روپے، ملتان ون میں 5لاکھ روپے،خوشاب میں ایک لاکھ روپے، پراپرٹی ٹیکس زون 15لاہور مین 40ہزار روپے، زون 10میں ایک لاکھ روپے، میانوالی میں 2لاکھ روپے، راولپنڈی میں ایک لاکھ روپے، چکوال میں دو لاکھ روپے، ای ٹی او ون اینڈ ٹو فیصل آباد کے علاقے میں 10لاکھ روپے،ای ٹی او ون اینڈٹو گوجرانوالہ کے علاقے میں 22لاکھ روپے،قصور میں 5لاکھ روپے، زون تھری فیصل آباد میں 30لاکھ روپے، ڈی جی خان میں ڈیڑھ لاکھ روپے، ساہیوال میں 6لاکھ روپے،سیالکوٹ میں ایک لاکھ روپے، پراپرٹی ٹیکس زون 8و زون 9میں 35لاکھ روپے،بہاولپور میں 3لاکھ روپے،اٹک میں 50ہزار روپے، خانیوال میں 45ہزار روپے، رحیم یار خان میں 10لاکھ روپے،اوکاڑہ میں 4لاکھ روپے،جہلم میں دو لاکھ روپے،بہاولنگر میں دو لاکھ روپے، لیہ میں 20ہزار روپے، گجرات میں دو لاکھ روپے، ٹوبہ ٹیک سنگھ میں دولاکھ روپے،منڈی بہاوالدین میں پانچ ہزار روپے جبکہ پراپرٹی ٹیکس زون ون اور زون 8لاہور میں نیم سرکاری اداروں کے ذمے ڈیڑھ لاکھ روپے واجب الادا ہیں۔

مزید : صفحہ آخر