کرپشن کیخلاف مہم ، سراج الحق کا کراچی ، لاہور ، پشاور ، کوئٹہ میں احتجاجی دھرنو ں کا اعلان

کرپشن کیخلاف مہم ، سراج الحق کا کراچی ، لاہور ، پشاور ، کوئٹہ میں احتجاجی ...

 اسلام آباد(صباح نیوز)جماعت اسلامی کے امیر سینیٹر سراج الحق نے کرپشن کے خلاف ملک بھر میں مہم کے دوران تمام بڑے شہروں کراچی،لاہور،پشاور،کوئٹہ میں احتجاجی دھرنے دینے کا اعلان کر دیا ہے۔انہوں نے کہا کہ کرپشن کے سدباب کے لیے قانون کابل تیار کیا جا رہا ہے اسے بھی جلد ہی قانون سازی کے لیے پیش کیا جائے گا ۔انہوں نے مطالبہ کیا کہ سیاستدانوں،بیوروکریٹس سمیت تمام افراد کا بلا امتیاز اورسرعام احتساب کیا جائے۔پاکستان کے شہریوں کو معلومات تک رسائی کا حق دیا جائے تاکہ وہ معلوم کر سکیں کے اداروں میں کیا ہو رہا ہے۔سینیٹر سراج الحق اتوار کو نیشنل پریس کلب میں کرپشن سے پاک پاکستان کے موضوع پر سیمینار سے خطاب کر رہے تھے سیمینار کا اہتمام جماعت اسلامی اسلام آباد نے کیا تھا۔سیمینار سے جے یو آئی کے رہنماء سابق ممبر قومی اسمبلی حافظ حسین احمد،ماہر معیشت ڈاکٹر شاہد حسن ،جماعت اسلامی کے نائب امیر میاں اسلم ،معروف صحافی حامد میر ،زبیر احمد خان اور میاں رمضان نے بھی خطاب کیا۔سراج الحق نے کہا کہ پاکستان میں کرپشن کی وجہ سے دولت قومی ترقی پر خرچ ہونے کے بجائے چند ہاتھوں میں جارہی ہے کرپشن کا خاتمہ کر کے پاکستان کے ترقیاتی بجٹ کو دوگنا کیا جا سکتا ہے پانچ سے سولہ سال تک کے بچوں کو مفت تعلیم دی جا سکتی ہے جبکہ ہر غریب کو مفت علاج اور بے گھر کو شلٹر فراہم کیا جا سکتا ہے۔سراج الحق نے کہا کہ نیب کے چیئرمین جنرل شعیب، جنرل امجد کو استعفیٰ دینا پڑا ۔جنرل شاہد کو استعفیٰ پر مجبور کیا گیا اور اب قمر الزمان کو بھگانے کی تیاری کی جارہی ہے۔پاکستان میں بلا امتیاز احتساب کی ضرورت ہے ۔احتساب کا نام پنجاب میں لیا جاتا ہے تو اسے پشاور کا راستہ دکھایا جاتا ہے وہاں سے کوئٹہ کا ہمیں کرپٹ لوگوں کا سماجی بائیکاٹ کرنا ہوگا جماعت اسلامی کرپشن کے خلاف مہم کے تحت لاہور،کراچی ،پشاور،کوئٹہ میں احتجاجی دھرنے دے گی۔ کرپشن کے سدباب کے لیے قومی اسمبلی میں قانون کا مسودہ بھی پیش کیا جائے گا۔انہوں نے کہا کہ اگر کوئی لوڈ شیڈنگ کے خلاف مظاہرہ کرے تو اس کے خلاف دہشت گردی کا مقدمہ بھی درج کیا جاتا ہے اگر کسی پر کرپشن ثابت ہو جائے تو اس کی جائیداد ،شناختی کارڈ پاسپورٹ ضبط اور دہشت گردی کا مقدمہ بھی درج ہونا چاہیے جماعت اسلامی پاکستان کو اخلاقی ،مالی اور انتخابی کرپشن سے نجات دلانا چاہتی ہے ہم کرپشن کے خلاف جہاد کریں گے کرپشن سے پاک لوگوں کو اکٹھا کریں گے کے پی کے سے اس سلسلے میں مہم شروع کر دی ہے ہم ملک کو کرپشن سے نجات دلا کر خوشحال پاکستان بنائیں گے۔جے یو آئی کے رہنماء حافظ حسین احمد نے کہا کہ بد قسمتی سے نیب کے ادارے کے خلاف ریفرنس آتا دکھائی دے رہا ہے حالانکہ نیب کے چیئرمین کو لانے والوں میں یہ لوگ خود شامل تھے۔انہوں نے کہا کہ دینی جماعتوں اور ان کے رہنماؤں پر کرپشن کا کوئی الزام نہیں ہے ہم یہ ملک چھوڑ کر دوبئی جائیں گے اور نہ لندن، ماضی میں این آر او کے ذریعے پانچ سو افراد کو چھوٹ دی گئی۔

مزید : صفحہ اول