افغان طالبان نے تاپی گیس منصوبے کو تحفظ دینے کی حامی بھر لی

افغان طالبان نے تاپی گیس منصوبے کو تحفظ دینے کی حامی بھر لی
افغان طالبان نے تاپی گیس منصوبے کو تحفظ دینے کی حامی بھر لی

  

اسلام آباد (صباح نیوز) افغان طالبان نے ترکمانستان ، افغانستان، پاکستان اور بھارت (تاپی ) گیس پائپ لائن منصوبہ کو تحفظ دینے کی حامی بھرلی۔ نجی ٹی وی کے مطابق ترکمانستان نے گیس پائپ لائن کی سکیورٹی کے حوالے سے افغانستان اور پاکستان سے رابطہ کیا تھا اور استدعا کی تھی کہ وہ طالبان سے رابطہ کریں اس پر پاکستانی اور افغان حکام نے باقاعدہ افغان طالبان سے رابطہ کیا ہے اور افغان طالبان کی قیادت سے مذاکرات کے نتیجہ پر بات سامنے آئی ہے کہ افغان طالبان نے گیس پائپ لائن منصوبہ کے مشروط تحفظ کی ذمہ داری لے لی ہے۔ طالبان نے یقین دہانی کروائی ہے کہ تاپی گیس پائپ پر دہشت گرد حملوں کو روکا جائے گا اور اس کے تحفظ کو یقینی بنایا جائے گا طالبان نے کہا ہے کہ اگر کسی مرحلہ پر امریکہ یا نیٹو گیس پائپ لائن منصوبہ کا حصہ بنتی ہیں تو پھر طالبان گیس پائپ لائن منصوبہ کی حفاظت کے ذمہ دار نہیں ہوں گے۔ واضح رہے کہ تاپی گیس پائپ لائن منصوبہ 10 ارب ڈالر کی لاگت سے مکمل کیا جائے گا گیس پائپ 1814 کلو میٹر طویل ہو گی اور یہ منصوبہ 2019 ءکے آخر تک مکمل ہو گا۔

مزید : اسلام آباد