’اگر امریکہ نے ایک قدم بھی آگے بڑھایا تو اپنے ایٹم بم چلادیں گے‘ سنگین ترین دھمکی دے دی گئی، دنیا کیلئے بڑا خطرہ!

’اگر امریکہ نے ایک قدم بھی آگے بڑھایا تو اپنے ایٹم بم چلادیں گے‘ سنگین ترین ...
’اگر امریکہ نے ایک قدم بھی آگے بڑھایا تو اپنے ایٹم بم چلادیں گے‘ سنگین ترین دھمکی دے دی گئی، دنیا کیلئے بڑا خطرہ!

  

پیانگ یانگ(مانیٹرنگ ڈیسک) امریکہ اور جنوبی کوریا کی مشترکہ جنگی مشقیں شروع ہونے پر شمالی کوریا نے کسی بھی ممکنہ خطرے سے نمٹنے کے لیے ”پیشگی ایٹمی حملے“ کی دھمکی دے دی ہے۔ امریکی اخبار واشنگٹن ٹائمز نے کورین سنٹرل نیوز ایجنسی کے حوالے سے رپورٹ میں بتایا ہے کہ شمالی کوریائی حکومت کی طرف سے ایک بیان جاری کیا گیا ہے۔ بیان میں کہا گیا ہے کہ ”امریکہ اور جنوبی کوریا کی فوجی مشقیں شمالی کوریا پر جنگ مسلط کرنے کا بہانہ ہیں۔ اگر ہمیں دشمن کی طرف سے جنگ شروع کرنے کا ذرا سا خطرہ بھی محسوس ہوا تو شمالی کوریا کی افواج اور عوام یہ موقع ضائع نہیں کریں گی۔ ایسے کسی خطرے کی صورت میں ہم فوری طور پر جنوبی کوریا اور امریکہ کی سرزمین پر ایٹمی حملہ کر دیں گے۔“

مزید جانئے: نئی ائیرلائن ’سلام ائیر‘ شروع کرنے کا اعلان، کہاں سے شروع کی جارہی ہے اور اس کی خاصیت کیا ہے؟ آپ بھی جانئے

رپورٹ کے مطابق بیان میں مزید کہا گیا ہے کہ ”ہم نے اپنی طرز کے فوجی آپریشن کی منصوبہ بندی کر رکھی ہے جس کے تحت جنوبی کوریا کو منہ توڑ جواب دیا جائے گا اور امریکہ پر حملہ اس کی اپنی سرزمین پر کیا جائے گا۔ اس فوجی آپریشن کی منظوری ہمارے سپریم کمانڈر کم جونگ ان دے چکے ہیں۔ہم نے اس فوجی آپریشن کے لیے مکمل تیار بھی کر رکھی ہے اور جنوبی کوریا کے خلاف کارروائی کرنے اور ایشیا پیسیفک میں امریکی فوجی تنصیبات اور امریکی سرزمین پر طاقتور ایٹمی حملہ کرنے کے لیے جنگی سازوسامان نصب کیا جا چکا ہے اور یہ ایٹمی ہتھیار فائر کیے جانے کے لیے بالکل تیار ہیں۔اگر ہم اسی وقت دشمنوں کو نیست و نابود کرنے کے لیے بٹن دبا دیں تو جارح امریکہ کی فضائ، سمندر اور زمین پر موجود وہ تمام تنصیبات پل بھر میں راکھ کے ڈھیر میں تبدیل ہو جائیں گی، جن کے بل پر امریکہ دنیا کا مسیحا بنا پھرتا ہے۔“

مزید : بین الاقوامی