ہائی کورٹ:ایم کیوایم کی بطور سیاسی جماعت رجسٹریشن کی منسوخی کی درخواست مسترد

ہائی کورٹ:ایم کیوایم کی بطور سیاسی جماعت رجسٹریشن کی منسوخی کی درخواست مسترد
ہائی کورٹ:ایم کیوایم کی بطور سیاسی جماعت رجسٹریشن کی منسوخی کی درخواست مسترد

  

لاہور(نامہ نگار خصوصی)لاہور ہائیکورٹ کے مسٹر جسٹس شاہد حمید نے ایم کیو ایم کی الیکشن کمیشن میں بطور سیاسی جماعت رجسٹریشن کے خلاف دائردرخواست مسترد کرتے ہوئے قرار دیا ہے کہ محض سیاسی بیانات کی بنیاد پر کسی جماعت کے خلاف کارروائی نہیں کی جا سکتی۔ یہ درخواست تحریک انصاف لائرز ونگ کے راہنما علی جاوید ڈوگر ایڈووکیٹ نے دائر کی تھی جس میںموقف اختیار کیا گیا تھاکہ مصطفیٰ کمال اور انیس قائم خانی کی اعترافی پریس کانفرنس ایم کیو ایم کے خلاف چارج شیٹ ہے،ثابت ہو گیا کہ ایم کیو ایم ریاست مخالف سرگرمیوں میں ملوث ہے۔ مصطفی کمال کہہ چکے ہیں کہ الطاف حسین "را"کے ایجنٹ ہیں۔ انہوں نے مزید موقف اختیار کیا کہ پولیٹیکل پارٹیز آرڈر کی دفعہ 15کے تحت ریاست مخالف سیاسی جماعت کی رجسٹریشن نہیں ہو سکتی،قانون کے مطابق وفاقی حکومت کوریاست مخالف سیاسی جماعت کے خلاف سپریم کورٹ کو ریفرنس بھجوانے کااختیار حاصل ہے جبکہ الیکشن کمیشن بھی قانون کے مطابق ایم کیو ایم کی رجسٹریشن منسوخ کر سکتا ہے، ایم کیو ایم کی بطور جماعت رجسٹریشن منسوخ کرنے کا حکم دیا جائے، عدالت نے قرار دیا کہ درخواست گزار کو پہلے متعلقہ اتھارٹی وزارت داخلہ یا الیکشن کمیشن سے رجوع کرنا چاہیے، عدالت محض سیاسی بیانات کی بنیاد پر کسی جماعت کے خلاف کارروائی نہیں کر سکتی، فاضل جج نے ان ریمارکس کے ساتھ درخواست مسترد کر دی۔

مزید : لاہور