فوجی ہوں میرا کمیشن ابھی خیم نہیں ہوا ،بھارت سرکار میری والدہ کو دھمکانا بند کرے ،کلبھوشن کا ویڈیو پیغام

فوجی ہوں میرا کمیشن ابھی خیم نہیں ہوا ،بھارت سرکار میری والدہ کو دھمکانا بند ...

اسلام آباد( آن لائن )پاکستان کی قید میں موجود بھارتی جاسوس کلبھوشن یادیو نے اپنی والدہ کے ساتھ ہونیوالے ناروا رویے پر بھارتی حکومت کو آڑے ہاتھوں لے لیا۔ تفصیلات کے مطابق بھارتی جاسوس کلبھوشن یادیو کی ایک نئی ویڈیو جاری کی گئی جس میں کلبھوشن یادیو کا کہنا تھا کہ میری والدہ مجھ سے ملاقات کرنے آئیں۔ میں اس ملاقات کی اجازت دینے کے بہترین اقدام پر پاکستانی حکام کا بے حد شکرگزار ہوں۔ لیکن یہاں میں بھارتی حکومت ، بھارتی عوام اور بھارتی نیوی سے ایک بات کہنا چاہتا ہوں کہ میرا کمیشن ابھی ختم نہیں ہوا۔ میں بھارتی نیوی کا کمیشنڈ آفیسر ہوں۔کلبھوشن نے کہاکہ میری والدہ اور میری اہلیہ کو سختی سے ہدایات دی گئی ہیں، میں نے ان کی آنکھوں میں خوف دیکھا ہے۔ جو مرضی ہو جائے لیکن میری والدہ اور میری اہلیہ کی آنکھوں میں خوف نہیں ہونا چاہئے۔ انہیں دھمکایا جا رہا ہے، وہ بھارتی سفارتکار جو میری والدہ کے ساتھ آیا تھا ، جیسے ہی وہ مجھ سے ملاقات کر کے باہر نکلیں وہ سفارتکار ان پر چیخ رہا تھا۔کیا ان کو ڈرا دھمکا کر یہاں لایا گیا؟ ملاقات کروانا پاکستان کا ایک مثبت اقدام تھا، میں بے حد خوش تھا ، انہیں بھی خوش ہونا چاہئے تھا۔ لیکن باہر کھڑا بھارتی سفارتکار ان پر چیخ رہا تھا۔ کلبھوشن نے اپنی ویڈیو میں کہا کہ بھارت اور پاکستان کو سب کچھ بھلا کر ایک مثبت سمت کی جانب بڑھنا چاہیے۔ یا پھر ایک دوسرے کے خلاف ایسے ہی چلتے رہنا ہے؟کیوں کہا جاتا رہا کہ میں کمیشن افسر نہیں، یا میں بھارتی خفیہ ایجنسی کے لیے کام نہیں کر رہا تھا۔آخر معاملہ کیا ہے؟ یہ بات ٹھیک ہے کہ میں اپنی شناخت خفیہ رکھ کر کاروبار کر رہا تھا،میں یہاں کھڑا صاف اور واضح طور پر کہہ رہا ہوں کہ ہاں میں بھارتی خفیہ ایجنسی را کے لیے کام کر رہا تھا۔لیکن مجھے بے حد افسوس ہوا کہ میری والدہ کو دھمکایا گیا اور ڈرایا گیا تھا۔

مزید : صفحہ آخر