مذہبی منافرت پر مبنی مواد شیئر کرنے والے 14ٹوری اراکین معطل

مذہبی منافرت پر مبنی مواد شیئر کرنے والے 14ٹوری اراکین معطل

لندن(آئی این پی)اسلامو فوبیک اورنسلی منافرت پرمبنی مواد سول میڈیا پر شیئر کرنے والے 14ٹوری اراکین کو معطل کردیا گیا ہے۔ٹوری رہنما بیرونس سعیدہ وارثی نے وزیراعظم پر کڑی تنقید کرتے ہوئے کہاہے کہ پارٹی میں ادارہ جاتی اسلامو فوبیا پر وزیراعظم ٹریزامے شترمرغ کی طرح سر ریت میں دبارہی ہیں۔بین الاقوامی خبر رساں ادارے کے مطابق برطانیہ کی حکمراں جماعت کنزرویٹو پارٹی کے جن رہنماوں کو اسلاموفوبیا یا نسلی منافرت سے متعلق الفاظ پر معطل کیا گیا ہے ان میں سے کئی نے انتہائی نفرت انگیز باتیں سوشل میڈیا پر شیئر کی تھیں۔ تاہم اسلام کے بارے میں 2015 میں انتہائی نازیبا (بقیہ نمبر40صفحہ7پر )

الفاظ کہنے پر معطل کونسل امیدوار پیٹرلیمب بحال کر دیے گئے ہیں۔صورتحال پر ردعمل میں برٹش پاکستانی رکن پارلیمنٹ بیرونس وارثی نے وزیراعظم ٹریزامے پر کڑی تنقید کی ہے اور کہا ہے کہ ٹریزامیسنتی ہی نہیں،جب بھی مسئلہ ہو وہ اسے تسلیم کرنے میں ناکام رہتی ہیں۔

مزید : ملتان صفحہ آخر