ملتان سرکل ‘ سی پیک روٹس پر 655 واٹر فلٹریشن پلانٹس لگانے کی تیاریاں

ملتان سرکل ‘ سی پیک روٹس پر 655 واٹر فلٹریشن پلانٹس لگانے کی تیاریاں

ملتان ( سپیشل رپورٹر) حکومت پنجاب کی ہدایات پر محکمہ پبلک ہیلتھ انجینئرنگ ملتان سرکل کی جانب سے سی پیک روٹس پر 4 ارب 19 کروڑ 74 لاکھ 80 ہزار روپے کی لاگت سے 655 واٹر فلٹریشن پلانٹس چاروں اضلاع میں لگانے کے لئے فزیبلٹی رپورٹس حکومت پنجاب کو بھجوا دی گئیں۔ مذکورہ منصوبہ جات کے فنڈز آئندہ مالی سال 2019۔20ء کے بجٹ میں مختص کر کے فراہم کیا جائے گا۔ مذکورہ منصوبہ سے دیہی (بقیہ نمبر36صفحہ12پر )

علاقوں کے مکینوں سمیت سی پیک روٹس اور روڈ یوزر بھی مستفید ہو سکیں گے۔حکومت پنجاب نے چیف سیکرٹری پنجاب کے ذریعے محکمہ پبلک ہیلتھ انجینئرنگ کے سیکرٹری کو بھجوائی جانے والی ہدایات کے مطابق ملتان سرکل سمیت پنجاب کے تمام سکولز افسران سے سی پیک روٹس سے لنک کرنے والے دیہات اور چکوک میں صاف پانی کی فراہمی کے لئے سولر سسٹم کے تحت واٹر فلٹریشن پلانٹ لگانے کا منصوبہ بنایا۔ مذکورہ منصوبہ سی پیک کا حصہ تصور کیا جائے گا جس کے تحت سی پیک روڈ یوزرز کے ساتھ ساتھ مقامی آبادی کے دیہات یونین کونسل اور چکوک کی عوام بھی مستفید ہو سکے گی جس کے تحت گزشتہ 2 روز قبل سپرنٹنڈنٹ آفیسر ملتان سرکل شیخ منیر احمد کی جانب سے بھجوائی جانے والی رپورٹس کے مطابق ضلع ملتان کی تینوں تحصیلوں میں 1ارب 81 کروڑ 74 لاکھ 80 ہزار روپے کی لاگت سے 280 واٹر فلٹریشن پلانٹس لگائے جائیں گے۔ اسی طرح ضلع لودھراں میں 79 کروڑ 80 لاکھ روپے کی لاگت سے تینوں تحصیلوں میں 168 واٹر فلٹریشن پلانٹس لگائے جائیں گے جبکہ ضلع خانیوال کی تینوں تحصیلوں میں 1 ارب 25 کروڑ 20 لاکھ روپے کی مدد سے 152 واٹر فلٹریشن پلانٹس لگائے جائیں گے۔ اسی طرح ضلع وہاڑی کی تینوں تحصیلوں کی مختلف یونین کونسل میں 33 کروڑ روپے سے زائد لاگت سے 55 واٹر فلٹریشن پلانٹس کی تنصیب کے لئے فزیبلٹی رپورٹس سیکرٹری محکمہ پبلک ہیلتھ انجینئرنگ پنجاب کو بھجوائی گئی ہے۔ مذکورہ پراجیکٹس کی تعمیر کے لئے آئندہ مالی سال 2019۔20ء کے بجٹ میں فنڈز مختص کر کے ممبران قومی و صوبائی اسمبلی کے ترقیاتی فنڈز میں مذکورہ منصوبہ جات شامل کر کے واٹر فلٹریشن پلانٹس کی تنصیب شروع کروائی جائے گی۔

مزید : ملتان صفحہ آخر