نوشہرہ، بیسک ایجوکیشن کمیونٹی سکول کی خواتین اساتذہ عدم ادائیگیوں پر سراپااحتجاج

نوشہرہ، بیسک ایجوکیشن کمیونٹی سکول کی خواتین اساتذہ عدم ادائیگیوں پر ...

  



نوشہرہ (بیورورپورٹ) بیسک ایجوکیشن کمیونٹی سکولز کی سینکڑوں خواتین اساتذہ تنخواہوں کی عدم ادائیگی اور ان سکولوں میں پڑھنے والے غریب طلبا و طالبات درسی کتب نہ ملنے کی وجہ سے سراپا احتجاج اساتذہ کے گھروں کے چولہے ٹھنڈے جبکہ طلبا و طالبات کا مستقبل تاریک ہونے کا خدشہ تعلیم سب کیلئے کا حکومتی دعوے ٹھس نوشہرہ کے سینکڑوں بیسک ایجوکیشن کمیونٹی اساتذہ اور ان سکولوں میں پڑھنے والے طلبا و طالبات کا مطالبات تسلیم نہ ہونے پر اسلام آباد میں پارلیمنٹ ہاوس کے سامنے احتجاج کی دھمکی بیسک ایجوکیشن کمیونٹی سکولز نوشہرہ کی سینکڑوں خواتین اساتذہ اوران سکولوں میں پڑھنے والے طلبا و طالبات نے گذشتہ 8ماہ سے تنخواہوں کی عدم ادائیگی اور درسی کتب نہ ملنے کے خلاف زبردست احتجاجی مظاہرہ کیا جس کی قیادت بیسک ایجوکیشن کیمونٹی کی ضلعی صدر ریاست بیگم کر رہی تھیں مظاہرین نے بینرز اور پلے کارڈ ز اٹھا رکھے تھے جس پر ان کے حق میں مطالبات درج تھے مظاہرین نے خطاب کرتے ہوئے ریاست بیگم نے کہا کہ ہم تقریبا ً دو دہائیوں سے ملک میں شرح خواندگی بڑھانے میں حکومت وقت کے ساتھ بھر پور تعاون کر رہے ہیں لیکن اس کے باوجود ہم کئی ماہ سے تنخواہوں سے محروم ہیں جو کہ انصاف کے نعرے پر بنے والی حکومت کیلئے لمحہ فکریہ ہے انہوں نے کہا کہ بیسک ایجوکیشن کمیونٹی سکولز کی غریب اساتذہ تنخواہوں کو عدم ادائیگی کی وجہ سے شدید مالی مشکلات سے دو چار ہیں اگر حکومت نے ہمارے مطالبات تسلیم نہ کئے تو ہم اپنے طلبا و طالبات کے ہمراہ اسلام آباد میں پارلیمنٹ کے سامنے احتجاجی دھرنے پر مجبور ہوجائیں گے۔

مزید : پشاورصفحہ آخر